بین الاقوامی

انقرہ میں فوجی آپریشن کے لیے تفصیلات جمع کر رہے ہیں، ترکی ترک انٹیلی جنس حکام ادلب میں مختلف مقامات پر پھیل گئے اورخفیہ ٹھکانے بنالیے ہیں،بیان

1031061957

انقرہ (این این آئی)ترکی کی فوج اور انٹیلی جنس حکام سرحد عبور کرنے کے بعد شمال مغربی شام کے شہر ادلب میں داخل ہوگئے ،غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق ترک فوج اور انٹیلی جنس اہلکاروں نے کئی مقامات پر اپنے ٹھکانے بنا لیے ہیں۔ترکی کی مسلح افواج کے سربراہ نے ایک بیان میں کہا کہ ادلب میں فوجی کارروائی سے پیشتر وہ انٹیلی جنس کے ذریعے معلومات اکھٹی کررہے ہیں۔ اطلاعات کے مطابق ترک انٹیلی جنس حکام ادلب میں مختلف مقامات پر پھیل گئے ہیں۔توقع ہے کہ ترک فوج ادلب میں کوئی بڑا آپریشن جلد شروع کرے گی، حالانکہ آستانا مذاکرات میں ایران، ترکی اور روس کے درمیان طے پائے معاہدے میں ادلب میں کشیدگی کم کرنے پر اتفاق کیا گیا تھا۔ترک فوج کی ادلب میں انٹیلی جنس معلومات کے حصول کی مہم کے دوران مانیٹرنگ پوائنٹس کا قیام بھی شامل ہے۔ شامی اپوزیشن کے ذرائع کے مطابق ترک انٹیلی جنس اہلکار جبل الشیخ برکات اور کردوں کے زیرکنٹرول علاقے عفرین میں پھیل گئے ہیں۔ذرائع کے مطابق ترک فوج کے ادلب میں آپریشن میں سابقہ’النصرہ فرنٹ‘ اور موجودہ ’تحریر شام محاذ‘ کے ساتھ بھی مقابلہ ہوگا کیونکہ ادلب کے بیشتر علاقوں پر اس گروپ کا کنٹرول ہے اور اس نے ایران، روس اور ترکی کے درمیان آستانا میں طے پائے معاہدے کی مخالفت کی تھی۔