آرٹ اور انٹرٹینمنٹ تازہ ترین

پاکستانی شارٹ فلم ’لالا بیگم‘ کیلئے امریکی فلم فیسٹیول میں بڑا اعزاز

lala begum

پاکستانی ہدایت کار مہرین جبار کی شارٹ فلم ’لالا بیگم‘ نے واشنگٹن ڈی سی میں ہونے والے 6ویں سالانہ ساؤتھ ایشین فلم فیسٹیول میں بہترین اسکرین پلے کا ایوارڈ حاصل کرنے کے ساتھ پاکستانی سینما کو دنیا بھر میں مزید سرخرو کردیا۔

اس فیسٹیول کی میزبانی ڈی سی ساؤتھ ایشین آرٹس کونسل کی جانب سے کی جاتی ہے جس کا شمار واشنگٹن ڈی سی میں ہونے والے سب سے کامیاب اسکرین ایونٹس میں کیا جاتا۔

فیسٹیول میں ہندوستان، پاکستان، افغانستان، نیپال اور سری لنکا کے بہترین سینما کی نمائش ہوتی۔


40 منٹ دورانیے کی اس شارٹ فلم ’لالا بیگم‘ کا اسکرین پلے سید محمد احمد نے تحریر کیا، سید محمد احمد کا شمار پاکستان کے کامیاب مصنفوں میں کیا جاتا جنہوں نے 1990 کی دہائی میں کامیاب ڈرامے ’تم سے کہنا تھا‘ کی کہانی تحریر کی، انہوں نے تجزیہ کاروں کی جانب سے پسند کی گئی ڈرامہ فلم ’رام چند پاکستانی‘ کا اسکرین پلے بھی لکھا تھا اور مہرین جبار نے اس ہی فلم کے ساتھ ہدایت کاری میں ڈیبیو بھی کیا۔
56b99ef258da6
فلم ’لالا بیگم‘ کی بات کی جائے تو اس کی کہانی 1970 کے دور میں دو ایسی بہنوں محر (مرینہ خان) اور سحر (سونیہ رحمٰن قریشی) کے رشتے پر ہے جو ایک دوسرے سے دور ہیں، جنہوں نے تقریباً 20 سالوں سے ایک دوسرے سے بات نہیں کی، جس کی وجہ یہ تھی کہ سحر نے اپنے خاندان کے منع کرنے کے باوجود ایک خاندان سے باہر پسند کی شادی کی، تاہم کئی سالوں بعد اپنے شوہر کے انتقال کے بعد وہ جائیداد میں اپنا حق لینے واپس آتی ہے، جب انہیں ایک دوسرے کے اکیلے پن کا احساس ہوتا ہے۔