تازہ ترین قومی

کرکٹ:پاکستان کی ٹیم 450 رنز پر آوءٹ، آسٹریلیا کو 39 رنز سے کامیابی

pak-vs-aus-test-jpg2

لاہور (مانیٹرنگ ڈیسک): آسٹریلیا کے دورے پر گئی پاکستان کی کرکٹ ٹیم نے برسبین کے وولین گابا اسٹیڈیم میں جاری ٹیسٹ میچ کے پانچویں روز آسٹریلیا کی جانب سے دیئے گئے 490 رنز کے ہدف کے تعاقب میں پاکستانی ٹیم 450 رنز بنا سکی۔ کھیل مقررہ وقت سے 30 منٹ پہلے شروع ہوا تو اسد شفیق 100 اور یاسر شاہ 4 رنز کے ساتھ وکٹ پر موجود تھے اور پاکستان کو جیت کے لئے 108 رنز درکار تھے جب کہ اس کی دو وکٹیں باقی تھیں۔
میچ کے آخری دن کے آغاز پر بھی اسد شفیق نے شاندار بلے بازی جاری رکھی لیکن جب وہ 137 کے انفرادی اسکور آوءٹ ہو گئے۔ اسد شفیق کے بعد راحت علی نے یاسر شاہ کو سنگل لے کردیا تاہم مچل اسٹارک کی آخری گیند یاسر شاہ کے بیٹ سے چھو کر سلپ میں گئی تو وہ اپنی کریز سے باہر نکل گئے اور اسٹیون اسمتھ نے پھرتی دکھاتے ہوئے گیند وکٹوں پر دے ماری جس سے ان کی ذمہ دارانہ اننگز بھی 33 رنز پر پہنچ کر اختتام پزیز ہوگئی اور یوں آسٹریلیا 39 رنز سے کامیاب ہوگیا۔
آسٹریلیا کی جانب سے مچل اسٹارک نے دوسری اننگز میں 4 اور مجموعی طور پر میچ میں 7 کھلاڑیوں کو آؤٹ کیا جب کہ جیکسن برڈ کے حصے میں 3 وکٹیں آئیں اور ناتھن لیون نے 2 شکار کئے۔ اسد شفیق کو شاندار بلے بازی پر میچ کا بہتری کھلاڑی قرار دیا گیا۔
برسبین ٹیسٹ کی پہلی اننگز میں آسٹریلیا کے 429 رنز کے جواب میں پاکستان کی پوری ٹیم صرف 142 رنز پر ڈھیر ہوگئی تھی اور آسٹریلیا نے پاکستان کو فالو آن کرانے کے بجائے خود کھیلنے کا فیصلہ کیا۔ آسٹریلیا نے اپنی دوسری اننگز 202 رنز 5 کھلاڑی آؤٹ پر ڈکلیئر کرکے پہلی اننگز کی 287 رنز کی برتری کے ساتھ پاکستان کو جیت کے لئے 490 رنز کا پہاڑ جیسا ہدف دیا۔ آسٹریلیا کے پہاڑ جیسے ہدف کے تعاقب میں پاکستانی ٹیم نے ایک بار خود کو غیر متوقع ثابت کیا اور 450 رنز بنا ڈالے۔ وولین گابا میں پاکستان سے قبل چوتھی اننگز میں سب سے زیادہ اسکور 370 تھا جو انگلینڈ نے 07-2006 میں ایشز سیریز کے دوران بنایا تھا جب کہ آسٹریلیا کے کسی بھی میدان میں سب سے زیادہ رنز کا ریکارڈ بھارت کا تھا جو اُس نے 78-1977 میں ایڈیلیڈ کے میدان میں چوتھی اننگز میں 445 رنز بنائے تھے لیکن پاکستان نے ان دونوں ریکارڈ کو توڑ ڈالا۔

About the author

aaj kal

148 Comments

Click here to post a comment

Your email address will not be published. Required fields are marked *