امید ہے کہ مظاہرے آج رات تک ختم ہو جائیں گے:فیاض الحسن چوہان

file photo

وزیر اطلاعات پنجاب فیاض الحسن چوہان نے دعویٰ کیا ہے کہ صوبائی حکومت علامہ خادم حسین رضوی اور دیگر سے مسلسل رابطے میں ہے، شنید ہے کہ مظاہرے آج رات ختم ہوجائیں گے۔

فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ پاکستان کے عوام سخت کرب کا شکار ہیں، وزیر مذہبی امور اور وفاقی حکومت نے معاملات کنٹرول کرنے کی کوشش کی ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ آج رات تک ملک میں جاری مظاہرے ختم ہونے کا امکان ہے، مظاہرین اور ان کے قائدین سے مذاکرات کے پانچ دور ہوچکے ہیں، اطلاعات ہیں کہ معاملات حل ہوچکے ہیں۔
فیاض الحسن چوہان نے کہا کہ مظاہرین کیخلاف گولی، لاٹھی اور آنسو گیس کا استعمال نہیں کیا۔

loading...

وزیر اطلاعات نے کہا کہ ‘میری اطلاع کے مطابق تقریباً معاملات طے ہوچکے ہیں، یہ میری اطلاعات ہیں میں باضابطہ اعلان نہیں کررہا’۔

فیاض چوہان نے کہا کہ سپریم کورٹ کے 3 وکلا ہیں جو نظرثانی کی رٹ پٹیشن دائر کررہے ہیں، وکلا میں محمدعزیر چغتائی، غلام مصطفی چوہدری اور اظہر صدیق شامل ہیں، نظرثانی اپیل کا فیصلہ آنے تک استدعا کی جائے گی کہ آسیہ کا نام ای سی ایل میں ڈال دیاجائے، مذاکرات میں یہ سب طے ہوا ہے، جن سے مذاکرات ہوئے وہ اپنی پٹیشن دائر کریں گے۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز سپریم کورٹ نے توہین رسالت کے کیس میں عیسائی خاتون آسیہ بی بی کی سزائے موت کو کالعدم قرار دیتے ہوئے رہائی کا حکم جاری کیا تھا جس کے بعد سے ملک کے مختلف شہروں میں تحریک لبیک پاکستان اور دیگر مذہبی جماعتوں کا دھرنا جاری ہے۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں