وزیر اعظم پاکستان عمران خان 5 روزہ سرکاری دورے پر چین روانہ

وزیر اعظم

وزیراعظم عمران خان چین کے 5 روزہ دورے پر روانہ ہوگئے جس کے دوران وہ چینی صدر، وزیراعظم اور دیگر اعلیٰ حکام سے ملاقاتوں میں دو طرفہ تجارت کے فروغ کیلئے بات کریں گے  جبکہ دونوں ملکوں کے درمیان کئی معاہدوں پر دستخط بھی کیے جائیں گے۔

روانگی سے قبل میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے وزیراعظم عمران خان نے کہا کہ چین کی حالیہ ترقی سے بہت کچھ سیکھ سکتے ہیں، جن مسائل کا ہم آج سامنا کررہے ہیں چین ان مسائل پر قابو پاچکا ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ چائنا پاکستان اقتصادی راہداری (سی پیک) میں سرمایہ کاری سے پاکستان کی معیشت بہتر ہوگی، کرپشن سے نمٹنے کیلئے کوشش کررہے ہیں، غربت کے خاتمے کیلئے چین کے اقدامات سے استفادہ کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ ‘چین کے دورے سے متعلق پرامید ہوں، پاکستان کو اپنی برآمدات بڑھانے کی ضرورت ہے، کرنٹ اکاؤنٹ خسارے پر قابو پانے کیلئے اقدامات کررہے ہیں، پاکستان میں زراعت، فشریز، سستے گھر میں سرمایہ کاری کے بہتر مواقعے ہیں، معیشت کی بہتری کیلئے دو آپشن تھے ، آئی ایم ایف اور دوست ممالک سے مدد حاصل کرنا، سعودی عرب اور یو اے ای سے تعاون حاصل کررہے ہیں۔

وزیراعظم نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں کہ سی پیک کے تحت جدید ٹیکنالوجی بھی پاکستان منتقل ہو، چین نے ہرمشکل گھڑی میں پاکستان کا ساتھ دیا ہے۔

واضح رہے کہ اس سے قبل عمران خان کو سرکاری وفد کے ہمراہ 2 نومبر کو چین روانہ ہونا تھا، تاہم گذشتہ روز ان کے شیڈول میں تبدیلی کی گئی اور اب وہ آج ہی روانہ ہوگئے۔

loading...

شیڈول کے مطابق وزیراعظم خصوصی طیارے سے بیجنگ پہنچیں گے، جہاں چین کے نائب وزیر خارجہ اور دیگر حکام ان کا استقبال کریں گے۔

2 نومبر کو وزیراعظم عمران خان چین کے صدر شی جن پنگ سے ملاقات کریں گے۔

3 نومبر کو وہ تیان من اسکوائر میں پیپلز ہیروز کی یادگار پر پھول چڑھائیں گے جبکہ 3 نومبر کو ہی نیشنل پیپلز کانگریس کے چیئرمین سے ملاقات ہوگی۔

اسی روز وزیراعظم کے اعزاز میں گریٹ ہال میں خیرمقدمی تقریب ہوگی جہاں انہیں گارڈ آف آنر پیش کیا جائے گا۔

وزیراعظم عمران خان 3 نومبر کو مختلف معاہدوں پر دستخط کی تقریب میں چینی ہم منصب سے ملاقات کریں گے، اس کے بعد وہ چین کے وزیراعظم کی طرف سے دی گئی ضیافت میں جائیں گے۔

3 نومبر کو ہی وزیراعظم عمران خان کی چین کے سرمایہ کاروں اور کمپنیوں کے سربراہوں سے ملاقات طے ہے۔

4 نومبر کو وزیراعظم سینٹرل پارٹی اسکول میں خطاب کے بعد شنگھائی روانہ ہوں گے، جہاں وہ چائنا انٹرنیشنل امپورٹ ایکسپو میں شرکت کریں گے۔

چین کے صدر 4 نومبر کو امپورٹ ایکسپو میں شریک رہنماؤں کے اعزاز میں ضیافت دیں گے۔

وزیراعظم عمران خان 5 نومبر کو شنگھائی میں ویت نام کے وزیراعظم سے ملاقات کریں گے جبکہ اسی روز وہ شنگھائی کی مقامی قیادت سے ملاقات اور پاکستان بزنس فورم سے بھی خطاب کریں گے اور پھر وطن واپس روانہ ہوں گے۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں