ایسی تصاویر جو صرف بلندی سے دکھائی دیتی ہیں

تصاویر

فرانس کے ایک دردمند فنکار نے عوامی شعور کے لیے ایسے فن پارے بنائے ہیں جو صرف ایک خاص بلندی سے ہی دیکھے اور سمجھے جاسکتے ہیں۔

سیپ گھاس کے وسیع میدان اور زمینوں پر 5 سے 10 ہزار مربع میٹر وسیع تصاویر پینٹ کرتےہیں جو بہت بڑی ہونے کی وجہ سے بہت دور سے دیکھی جاسکتی ہے۔ ان کی تصاویر کا موضوع یورپ میں آنے والے تارکینِ وطن ہیں جن کے لیے وہ عوامی شعور بیدار کرنا چاہتے ہیں۔

سب سے پہلے انہوں نے سوئزرلینڈ میں واقع جنیوا جھیل کے کنارے ایک چھوٹی بچی کی پینٹنگ بنائی تھی جو جھیل میں کاغذ کی ایک کشتی دوڑا رہی ہے ۔ اس تصویر سے انہیں غیرمعمولی شہرت ملی جو 5000 مربع میل وسیع تھی۔تصاویر

loading...

اپنی تخلیق کو سیپ نے ’پیغامِ امید‘ کا نام دیا تھا۔ سیپ پہلے تصویر چھوٹے کاغذ پر بناتے ہیں پھر ایک خاص پینٹ سے گھاس کو رنگین کرتے ہیں جو دھیرے دھیرے ایک بڑی سی تصویر میں ڈھل جاتی ہے۔ وہ ماحول دوست اور ازخود مٹ جانے والے روغن سے زمین کے کینوس پر شاہکار تخلیق کرتے ہیں۔

تصاویر

سیپ نے یہ بچی کی تصویر اس لیے بنائی کہ وہ یورپی اقوام کو ان تارکینِ وطن کا احساس دلاسکے جو اپنی جان خطرے میں ڈال کر یہاں پناہ لینے پر مجبور ہیں۔ وہ اپنی تصاویر کے ذریعے فرانسیسی تنظیم ایس او ایس کی بھی مدد کررہے ہیں جو تارکینِ وطن کی جان بچانے کے لیے سرگرم ہے۔

Spread the love
  • 2
    Shares

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں