سنی لیون کو انتہا پسندوں کی دھمکیاں، آخر سنی لیون نے ایسا کیا کام کردیا؟

سنی لیون

ممبئی: بالی وڈ اداکارہ سنی لیون کی تامل فلم ” ویرامادیوی” کی ریلیز خطرے میں پڑ گئی، فلم میں سنی لیون “ویراما دیوی” کے کردار میں نظر آئیں گی۔

تاہم بھارتی ہندو انتہا پسند جماعت کناڈا رکشنا ویدک(کے آروی) نے فلم ریلیز نہ ہونے کی دھمکی دی ہے۔

بھارتی ہندو جماعت کے یوتھ ونگ کے سربراہ آرہریش کا کہنا ہے کہ سنی لیون کسی طرح بھی ویرا ما دیوی کا کردار نبھانے کی اہل نہیں ہیں کیونکہ انکا ماضی داغدار ہے۔

فلم میں ان کے اس کردار سے بھارت کے ہر ہندو کے جذبات مجروح ہوئے ہیں اس لیے وہ فلم کو کسی بھی قیمت پر ریلیز کی اجازت نہیں دیں گے اور اگر فلم ریلیز کی گئی تو سینما گھروں کو جلادیں گے۔

واضح رہے کہ بالی وڈ اداکارہ سنی لیون کو گزشتہ برس بھی بنگلورو میں سال نو کے موقع پر شو کے دوران دھمکیوں کا سامنا کرنا پڑا تھا، ہندو انتہا پسند جماعتوں نے اداکارہ سنی لیون کے پوسٹرز بھی جلائے تھے۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں