موسیٰ کلیم اللہ کا خُدا سے کلام

سبز پوش

حضرت موسیؑ نے اللہ تعالیٰ سے پوچھا: یااللہ جب آپ اپنے بندے پر مہربان ہوتے ہیں تو کیا عطا کرتے ہیں ؟

اللہ تعالیٰ نے فرمایا: اگر شادی شدہ ہو تو بیٹی۔

حضرت موسیٰ نے پھر کہا: یااللہ اگر زیادہ مہربان ہوتے ہیں تو؟

اللہ تعالیٰ نے پھر فرمایا: دوسری بیٹی بھی عطا کر دیتا ہوں۔

حضرت موسیٰ نے پھر فرمایا: یااللہ اگر حد سے زیادہ مہربان ہوتے ہو تو پھر؟

اللہ تعالیٰ نے پھر فرمایا: اے موسیٰ ! پھر میں تیسری بیٹی عطا کرتا ہوں۔

اللہ تعالیٰ فرماتے ہیں کہ جب میں اپنے بندے کو بیٹا عطا کرتا ہوں تو اُسے کہتا ہوں کہ جاؤ اور اپنے باپ کا بازو بنو اور جب بیٹی عطا کرتا ہوں تو خود اس کے باپ کا بازو بنتا ہوں۔

اس لیے کہتے ہیں کہ بیٹی اللہ کی رحمت ہوتی ہے اس پر پریشان نہیں ہونا چاہیئے۔

Comments

comments

مزید پڑھیں۔  حضرت نوح علیہ السلام کا ملک الموت سے کلام

اپنا تبصرہ بھیجیں