وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس جاری

کابینہ
loading...

اسلام آباد : وزیراعظم عمران خان کی زیر صدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس جاری ہے جس میں اہم فیصلوں کی منظوری متوقع ہے۔

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم عمران خان کی زیرصدارت وفاقی کابینہ کا اجلاس وزیراعظم ہاؤس میں جاری ہے۔ اجلاس میں 6 نکاتی ایجنڈے پرغور کیا متوقع ہے۔ اجلاس تحریک انصاف کی حکومت کے 100 روزہ ایجنڈے پر عمل درآمد کا بھی جائزہ لیا جائے گا اور کابینہ ارکان اپنی وزارتوں کی کارکردگی رپورٹ وزیر اعظم کو پیش کریں گے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ کابینہ ترکی کے ساتھ نیشنل اسکل یونیورسٹی کے قیام کی منظوری دےگی جبکہ پاکستان اور جاپان میں مختلف شعبوں میں مفاہمتوں کی منظوری دی جائے گی۔ مالی نظم ونسق پالیسی بورڈمیں ماہرین کی شمولیت کی منظوری ایجنڈے میں شامل ہیں اور ڈی جی اے این ایف کے لیے میجرجنرل عارف کی تعیناتی کی منظوری ایجنڈے کا حصہ ہیں۔

وزیرخزانہ کو اقتصادی شعبوں میں تعیناتیوں کے اختیارات کی منظوری بھی ایجنڈے میں شامل ہے۔ خیال رہے کہ عمران خان نے وزیراعظم بننے کے بعد وفاقی کابینہ پہلے اجلاس میں سابق وزیراعظم نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کا نام ایگزٹ کنٹرول لسٹ ( ای سی ایل) میں ڈالنے کی منظوری دی تھی۔

وفاقی کابینہ کے 24 اگست کو ہونے والے دوسرے اجلاس میں صدر، وزیراعظم، وزرا اور ارکان پارلیمنٹ کے صوابدیدی فنڈز ختم کرنے کی منظوری دی گئی تھی جبکہ تیسرے اجلاس میں صدر نیشنل بینک کو ہٹانے اور جنوبی پنجاب صوبے کے لیے کمیٹی کے قیام سمیت متعدد اہم فیصلے کیے گئے۔

ستمبر 13 کے اجلاس میں سابقہ حکومت کی ٹیکس استثنیٰ پالیسی واپس لینے پر ترمیم لانے کا فیصلہ کیا گیا تھا، ترمیم کے بعد چارلاکھ سے آٹھ لاکھ تک سالانہ آمدن پر ایک ہزار روپے ٹیکس ہوگا، آٹھ لاکھ سے بارہ لاکھ تک سالانہ آمدن پر دو ہزار روپے ٹیکس ہوگا، جب کہ بارہ لاکھ سے چوبیس لاکھ سالانہ آمدن پر 5 فی صد ٹیکس لگے گا۔

Spread the love
  • 1
    Share

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں