اوگرا کی جانب سے گیس کی قیمتوں میں 10 سے 143 فیصد اضافہ

پیٹرولیم مصنوعات
loading...

آئل اینڈ گیس ریگولیٹری اتھارٹی نے صارفین کے لیے گیس 10 فیصد سے 143 فیصد تک مہنگی کرنے کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا۔

اوگرا کی جانب سے جاری نوٹیفکیشن کے مطابق بجلی بنانے والے کارخانوں کے لیے گیس 57 فیصد مہنگی کر دی گئی ہے جب کہ عام صنعتوں کے لیے گیس کی قیمتوں میں 40 فیصد فی یونٹ اضافہ کر دیا گیا ہے۔

نوٹیفکیشن کے مطابق کھاد سیکٹر کے لیے بطور فیول گیس 40 فیصد فی یونٹ مہنگی کر دی گئی ہے جب کہ کھاد سیکٹر کے لیے گیس بطور خام مال 50 فیصد فی یونٹ مہنگی کر دی گئی ہے۔

اوگرا نے سی این جی سیکٹر کے لیے بھی گیس 40 فیصد فی یونٹ مہنگی کر دی ہے۔

ماہانہ200  مکعب میٹر گیس استعمال پر فی یونٹ 20 فیصد مہنگی کی گئی ہے جب کہ ماہانہ 300 مکعب میٹر گیس استعمال پر فی یونٹ 25 فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔

اوگرا نے ماہانہ 400 مکعب میٹر گیس کے استعمال پر 30 فیصد فی یونٹ اضافہ کیا ہے جب کہ ماہانہ 500 مکعب میٹر اور زائد گیس استعمال پر143 فیصد اضافہ کیا گیا ہے۔

چیئرمین سی این جی ایسو سی ایشن نے اوگرا کی جانب سے گیس کی قیمت میں اضافے کو عوام کے ساتھ زیادتی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت اپنے فیصلے پرنظرثانی کرے۔

ان کا کہنا تھا کہ نئی گیس کی قیمتوں سے سی این جی کی قیمت میں 15 روپے فی کلو تک اضافہ متوقع ہے۔

Spread the love
  • 1
    Share

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں