خواجہ سعد رفیق کی موجودگی میں تحریک انصاف اور ن لیگ کے کارکنان میں تصادم

خواجہ سعد رفیق

لاہور: لاہور کے علاقے چونگی امرسدھو میں رہنما مسلم لیگ ن خواجہ سعد رفیق کی موجودگی میں تحریک انصاف اور مسلم لیگ ن کے کارکنان میں خوفناک تصادم ہوا ہے۔

دونوں جماعتوں کے کارکنان نے ایک دوسرے کو تشدد کا نشانہ بنایا جس کے نتیجے میں متعدد کارکنان سمیت رہنما مسلم لیگ خواجہ سعد رفیق شدید زخمی ہو گئے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق جیسے جیسے ضمنی الیکشن کی تاریخ قریب آرہی ہے ویسے ویسے سیاسی درجہ حرارت بڑھتا جارہا ہے اور اسکی تازہ ترین مثال ہمیں لاہور میں دیکھنے کو ملی جہاں این اے 131 میں مسلم لیگ ن کے امیدوار اور مرکزی رہنما خواجہ سعد رفیق کارنر میٹنگ کے لیے چونگی امرسدھو پہنچے جہاں انہوں نے مقامی کارکن کے ڈیرے پر کارکنان سے خطاب کیا ۔

سابق وفاقی وزیر جب واپس جارہے تھے تو گلیاں تنگ ہونے کے باعث تحریک انصاف کے کارکنان نے ان کو دیکھ لیا اور مسلم لیگ ن کے خلاف نعرے بازی شروع کر دی۔

ن لیگی کارکنوں نے بھی پی ٹی آئی کے خلاف نعرے لگانا شروع کر دیئے جس پر نوبت گالم گلوچ اور ہاتھا پائی تک جا پہنچی اور پھر دیکھتے ہی دیکھتے پی ٹی آئی کارکنوں اور ن لیگی جیالوں میں ڈنڈوں اور پتھروں کا آزادانہ استعمال شروع ہو گیا جبکہ اس موقع پر ہوائی فائرنگ بھی کی گئی۔
اس موقع پر متعد افراد زخمی ہوگئے۔۔زخمی ہو جانے والوں میں مسلم لیگ ن کے رہنما خواجہ سعد رفیق بھی شامل ہیں، اس تصادم میں ان کا سر پھٹ گیا۔ ابتدائی طبی امداد کے لیے لیگی رہنما سمیت متعدد کارکنان کو اسپتال پہنچا دیا گیا۔

Spread the love
  • 13
    Shares

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں