وزیر اعظم عمران خان کا بنی گالہ میں گھر غیر قانونی قرار

عمران خان

اسلام آباد:کیپیٹل ڈویلپمنٹ اتھارٹی (سی ڈی اے) نے وزیراعظم عمران خان کے بنی گالہ میں تعمیر شدہ گھر کو غیر قانونی تعمیرات پر نوٹس جاری کردیا

تاہم عمران خان کے گھر میں ذاتی سکیورٹی اسٹاف نے نوٹس وصول کرنے سے انکار کر دیا۔ ذرائع کے مطابق سی ڈی اے کے شعبہ بلڈنگ کنٹرول نے اسلام آباد کے زون فور کے موضع موہڑہ نور میں غیر قانونی تعمیرات پر 400 سے زائد گھروں کو نوٹس جاری کر دیے۔

بنی گالہ میں تعمیر وزیراعظم عمران خان کے گھر کو بھی زائد تعمیرات پر نوٹس جاری کرنے سی ڈی اے کا عملہ پہنچا تو وزیراعظم کے ذاتی اسٹاف نے نوٹس وصول کرنے سے انکار کر دیا۔

عمران خان کے سکیورٹی اسٹاف نے وزیراعظم کے سرکاری سکیورٹی اسٹاف سے پوچھنے کا وقت مانگ لیا۔
سی ڈی اے ذرائع کا کہنا ہے کہ نوٹسز میں تمام مالکان کو غیر قانونی تعمیرات کو ختم کرنے اور عمارتوں کو ریگولرائز کرنے کے لیے دو ہفتوں کا وقت دیا گیا ہے۔

نوٹسز نہ وصول کرنے والے مالکان کے نوٹس ان کے گھر پر آویزاں کیے جائیں گے، غیر قانونی تعمیرات پر نوٹسز سی ڈے اے آرڈینس 1960 کی دفعات 46 اور 49 سی ون کے تحت جاری کیے جائے گیں۔

خیال رہے کہ گزشتہ دنوں بنی گالہ میں تجاوزات سے متعلق کیس کی سماعت کے دوران ایڈیشنل اٹارنی جنرل نے سروے آف پاکستان کی رپورٹ سپریم کورٹ میں پیش کی تھی۔

دورانِ سماعت چیف جسٹس ثاقب نثار نے ریمارکس دیئے تھے کہ جنہوں نے بنی گالہ میں غیر قانونی تعمیرات کیں اُن سے جرمانے لیے جائیں اور اس سلسلے میں سب سے پہلے وزیراعظم عمران خان کو فیس ادا کرکے اپنی پراپرٹی ریگولرائز کرانا ہوگی۔

Spread the love
  • 2
    Shares

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں