غزہ میں اسرائیلی فوج کی فائرنگ، 3 فلسطینی شہید

فلسطین

غزہ: غزہ کی سرحد پراحتجاج کے دوران اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے تین فلسطینی شہید جبکہ 300 سے زائد افراد زخمی ہوگئے۔

تفصیلات کے مطابق غزہ کی سرحد پر فلطسینیوں کی جانب سے اسرائیل کے خلاف ہونے والے احتجاج کے دوران اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے 3 فلسطینی شہید جبکہ درجنوں زخمی ہوگئے۔ غزہ کی وزارت صحت کے ترجمان کے مطابق اسرائیلی فوج کی فائرنگ سے 12 سالہ فارس حفیظ اور 24 محمود اکرم موقع پرہی دم توڑ گئے۔

loading...

وزارت صحت کے مطابق اسرائیلی فوج نے فلسطینی مظاہرین کومنتشر کرنے کے لیے آنسو گیس اور ربڑ کی گولیوں کا بے دریغ استعمال کیا جس کی زد میں آکر متعدد فلسطینی زخمی بھی ہوگئے۔ اسرائیلی افواج کی فائرنگ سے شہید ہونے والے فلسطینی نوجوانوں کی نماز جنازہ ادا کردی گئی جس میں ہزاروں افراد نے شرکت کی اور اسرائیلی بربریت کے خلاف مظاہرہ بھی کیا گیا۔

یاد رہے کہ دو روز قبل اسرائیلی فورسز نے احتجاج کرنے والے فلسطینیوں پر فائرنگ کردی تھی جس کے نتیجے میں نوجوان شہید جبکہ 24 فلسطینی زخمی ہوگئے تھے۔

واضح رہے کہ غزہ میں اسرائیلی قبضے کے خلاف 30 مارچ سے شروع ہونے والے مظاہروں میں اسرائیلی فوجیوں کی فائرنگ سے تقریباَ 200 فلسطینی جاں بحق اور 21 ہزار سے زائد مظاہرین زخمی ہوچکے ہیں۔

Spread the love
  • 1
    Share

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں