شام کے قصبے مسرابا میں روسی تیاروں کی بمباری، 20 شہری ہلاک 40 سے زیادہ زخمی

شام کے قصبے مسرابا میں روسی تیاروں کی بمباری
loading...

شام کے شہر دمشق کے قریب واقع قصبہ مسرابا پر روسی تیاروں کی بمباری۔ بمباری سے 20 شہر ی ہلاک  40 زخمی۔

تفصیلات کے مطابق شام کے شہر  دمشق کے قریب واقع قصبہ مسرابا جو  اپوزیشن کے زیر کنٹرول ہے ، میں روسوی تیاروں نےبمباری کی جس کے نتیجےمیں 20 شامی شہری ہلا ک  اور 40 زخمی ہوگے۔ ہلاک ہونے والوں میں 11 خواتین اور بچے بھی شامل ہیں۔

شام کے قصبے مسرابا میں روسی تیاروں کی بمباری

ان کے علاوہ شامی دارالحکومت کے نزدیک دیگر قصبوں پر فضائی بم باری میں کم از کم 10 افراد اور موت کی نیند سلا دیے گئے۔سوشل میڈیا پر جاری وڈیو کلپوں میں امدادی کارکنان کو ملبے کے نیچے سے بچوں اور خواتین کو نکالتے ہوئے دکھایا گیا ہے۔

ان وڈیوز کی آزاد ذرائع سے تصدیق نہیں ہوئی۔روسی یلغاروں کی مدد سے بشار کی فوج نے آخری چند ماہ میں الغوطہ الشرقیہ کے علاقے میں اپنی عسکری کارروائیوں میں بے پناہ اضافہ کر دیا۔ علاقے کے محاصرے کے لیے کوشاں شامی حکومت کے اس اقدام کو مقامی آبادی اور امدادی کارکنان نے لوگوں کو بھوکا مارنے کی دانستہ کوشش قرار دیا ہے۔مذکورہ طیاروں نے اپوزیشن کے جنگجوؤں کے زیر کنٹرول شہر حرستا پر بھی بمباری کی۔

شام کے قصبے مسرابا میں روسی تیاروں کی بمباری

رواں ہفتے مسلح اپوزیشن عناصر نے شہر کے قلب میں ایک بڑے اڈّے پر قبضہ کر لیا تھا جس کو بشار کی فوج رہائشی علاقوں پر گولہ باری کے لیے استعمال کر رہی تھی۔اقوام متحدہ کے اعلان کے مطابق علاقے میں تقریبا 4 لاکھ شہری محصور ہیں جن کو سنگین المیے کا سامنا ہے۔

شام میں انسانی حقوق کی تنظیم المرصد کے مطابق روسی فضائیہ اب تک ہزاروں شہریوں کو ہلاک کر چکی ہے۔ تاہم ایسے تمام الزامات کو مسترد کر رہا ہے۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں