عابد حسین نے احسن اقبال کو گولی کیوں ماری، حیران کن وجہ سامنے آگئی

وزیرداخلہ احسن اقبال

وزیر داخلہ نے حملہ آور کے ساتھ وعدہ خلافی کی

نارووال: اتوار کی شام وزیرداخلہ احسن اقبال قاتلانہ حملے میں بچ گئے۔ ایک کارنر میٹنگ کے دوران وزیر داخلہ پر عابد حسین نامی شخص کی طرف سے پستول کے ذریعے حملہ کیا گیا۔ جس کی گولی وفاقی وزیرداخلہ کی کوہنی پر لگی۔ جو پیٹ تک پہنچ گئی۔ اطلاعات کے مطابق وزیرداخلہ نے عابد حسین سے سرکاری نوکری دلوانے کا وعدہ کیا تھا اور ملزم دو سالوں سے احسن اقبال کو اپنا وعدہ یاد کروا رہا تھا۔

loading...

جس کے بعد ملزم کی طرف سے اتوار کے روز احسن اقبال پر جان لیوا حملہ کیا گیا۔ جس میں وہ خوش قسمتی سے بال بال بچ گئے۔ ملزم عابد حسین تحریک لبیک پاکستان کا علاقائی صدر ہے۔

واضح رہے کہ احسن اقبال اس وقت لاہور کے سروسز اسپتال میں ہیں، جہاں آپریشن کے بعد انکے بازو میں لگی گولی نکال دی گئی ہے، اور اب انکی حالت خطرے سے باہر ہے۔

Comments

comments

مزید پڑھیں۔  پرائیویٹ اسکولوں کو زائد فیسیں وصول کرنا مہنگا پڑ گیا

اپنا تبصرہ بھیجیں