7 ستمبر ایک تاریخ ساز دن ہے کیا آپ جانتے ہیں اس دن کیا اہم ترین فیصلہ ہوا تھا ؟

ستمبر

7 ستمبر 1974ء  وہ تاریخ ساز دن ہے جس کو اسلامی جمہوریہ پاکستان کی قومی اسمبلی اور بعد میں سینیٹ نے آئین پاکستان کے تحت مرزا غلام احمد قادیانی کو نبی ماننے والوں کو غیر مسلم اقلیت قرار دے کر پوری ملت اسلامیہ کے جذبات کی عکاسی کی۔

 یہ دن اس وقت کے وزیراعظم ذوالفقار علی بھٹو اراکین پارلیمنٹ و اراکین سینیٹ کے لئے بہت بڑا اعزاز اور ان کی بخشش و نجات اور نبی رحمت کی شفاعت کا سبب بنے گا۔

عقیدہ ختم نبوت پوری ملت اسلامیہ کا اجماعی عقیدہ ہے اور دین اسلام کی بنیادی اساس ہے، حضور سید الانبیاء، خاتم النبیین و مرسلین، رحمت العالمین اللہ تعالیٰ کے آخری نبی اور رسول ہیں۔ آپؐ کی تشریف آوری سے قصر نبوت مکمل ہوگیا ہے اس راسخ اور سچے عقیدہ پر قرآن و حدیث میں پوری صراحت موجود ہے۔

loading...

 اب جو بھی شخص نبوت کا دعویٰ کرتا یا اس کے دعوے کو تسلیم کرتا ہے وہ دائرہ اسلام سے خارج ہے اور مرتد کی سزا قرآن و حدیث میں واضح ہے۔

 عقیدہ ختم نبوت کے تحفظ کے لئے کسی بھی قربانی سے دریغ نہیں کیا جائے گا، ہمارے عظیم اسلاف اکابر علماء و مشائخ نے روز اول سے ہی انکار ختم نبوت کے عقائد باطلہ کے خلاف علمی و عملی جدوجہد کی اور جہاد کا علم بلند کیا اور یہ سلسلہ آج تک جاری ہے اور انشاء اللہ قیامت تک رہے گا۔

Comments

comments

مزید پڑھیں۔  غیر ملکی فنڈنگ کیس اب پیپلز پارٹی اور ن لیگ کو بھی جواب دینا ہوگا

اپنا تبصرہ بھیجیں