حاملہ بکری کے ساتھ جنسی زیادتی

جنسی زیادتی

لوساکا: مشرقی افریقہ کے ملک زیمبیا میں ایک شیطان صفت شخص نے حاملہ بکری کو جنسی زیادتی کا نشانہ بنا ڈالا۔

22 سالہ  شخص کا نام ریوبین موامبا تھا جس نے موٹونو نامی قصبے میں بکری کو اپنی ہوس کا نشانہ بنایا۔ پولیس نے اسے گرفتار کرکے عدالت میں پیش کیا جہاں سے اسے 5 سال قید کی سزا سنائی گئی۔

تاہم پراسیکیوٹرز مزید کڑی سزا کے لیے ہائیکورٹ چلے گئے جہاں سے اب اس کی سزا میں اضافہ کرتے ہوئے 15 سال قید بامشقت سنا دی گئی ہے۔

loading...

پراسیکیوٹرز نے عدالت میں بتایا کہ ”دوران تفتیش موامبا نے اعتراف کیا کہ اسے معلوم تھا کہ بکری حاملہ ہے۔ اس کے باوجود اس نے یہ قبیح حرکت کی۔“ ہائیکورٹ کی جج جسٹس ایمریا سنکوتو کا کہنا تھا کہ ”اس طرح کا کیس کبھی پہلے میرے سامنے نہیں آیا اور میں واقعے کا سن کر مجھے شدید جھٹکا لگا۔

مجرم کا جرم ایسا سنگین ہے کہ اسے مزید سخت سزا دی جانی چاہیے۔“ ان ریمارکس کے بعد جسٹس ایمریا نے اس کی پانچ سالہ سزا کو 15سال میں بدل کر اسے جیل بھجوا دیا۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں