کام زیادہ ہیں مگر نیند بھی پوری کریں

مناسب نیند

مصروفیات زندگی کا لازمی حصہ ہے لیکن ان میں الجھ کر اپنے آرام کو فراموش کر دینا مناسب نہیں ہے۔

 ہمارے ہاں لوگ عموما کاموں کی زیادتی کے باعث اپنی نیند ترک کر دیتی ہیں لیکن یہ طرز عمل بالکل بھی ٹھیک نہیں ہے کیونکہ نیند آپ کی صحت وتندرستی بلکہ پورے طرز زندگی میں اہم کردار ادا کرتی ہے۔

انسان کے لیے کم از کم چھ سے آٹھ گھنٹے کی نیند لینا ضروری ہے رات کی بھرپور نیند آپ کی ذہنی و جسمانی صحت کی بہترین کارکردگی ہے ضامن ہے۔کیوں کہ نیند کے دوران ہمارا جسم ذہنی و جسمانی کارکردگی کو فعال رکھنے کے لئے کام کرتا ہے۔ بچوں کی نشونما میں بھی نیند بہت کارآمد ثابت ہوتی ہے۔

نیند

نیند کی کمی کے باعث صحت پر بہت برا اثر پڑتا ہے جس سے آپ صحت کے مختلف مسائل سے دوچار ہوسکتے ہیں۔ نیند آپ کی طرز زندگی اور لوگوں کے ساتھ آپ کے مجموعی رویے پر اثر انداز ہوتی ہے ۔نیند نہ صرف ذہنی سکون بخشتی ہے بلکہ ذہنی استعداد میں بھی اضافہ کرتی ہے۔

جب ہم محو خواب ہوتے ہیں تو اس دوران ہمارا ذہن اگلے روز کے کاموں کی انجام دہی کے لئے تیاری کرتا ہے۔

 اس طرح یاداشت میں اضافے کی نئی راہیں کھلتی ہیں اور آپ مختلف باتوں اور معلومات کو بہتر طور سے یاد رکھ پاتے ہیں۔

 ریسرچ سے ثابت ہوا ہے کہ رات کی بھرپور نیند آتی ہے آپ کی سیکھنے کی صلاحیت میں اضافہ کرتی ہے، چاہے آپ ریاضی کے سوالات سیکھنا چاہتے ہوں کوئی کھیل سیکھ رہے ہوں یا ڈرائیونگ کے اسباق لینے میں مصروف ہوں بہرطور آپ کے لئے سیکھنے کی استعداد اور مسائل کو حل کرنے کی صلاحیت بڑھاتی ہے ۔نیند کی بدولت آپ کا ارتکاز قوت فیصلہ اورتخلیقی صلاحیتیں جلا پاتی ہیں۔

loading...

نیند

ریسرچ سے یہ بھی ثابت ہوا کہ نیند کی کمی کے باعث آپ کو کسی فیصلے پر پہنچنے مسائل کو حل کرنے اور اپنے جذبات کو کنٹرول کرنے میں دقت پیش آنے لگتی ہے۔

نیند کی کمی کا تعلق ڈپریشن اور خود کشی جیسے رجحنات سے بھی منسلک ہے۔ جسمانی کارکردگی کے حوالے سے نیند خصوصی اہمیت کی حامل ہے۔ مثال کے طور پر نیند کی کمی دل کے امراض  بلڈ پریشر ذیابطیس  فالج اور موٹاپے کے خطرات میں اضافے کا باعث بنتی ہے، لہذا ہمیشہ پوری نیند لیں تاکہ آپ کا مدافعتی نظام صحت مند رہے اور آپ بیماریوں کا شکار آسانی سے نہ ہو پائیں۔

یہاں آپ کے لئے کچھ تجاویز پیش کی جارہی ہیں جس پر عمل کرنے سے آپ کو نیند آ سکتی ہے

  • سونے اور جاگنے کا باقاعدہ شیڈول مقرر کریں
  • سونے سے کم ازکم چار گھنٹے پہلے کوئی ایسا مشروب نا پین جس میں کیفین شامل ہوں
  • سونے سے فوری پہلے کھانا نہ کھائیں بلکہ اس کا اہتمام چند گھنٹے پہلے کریں
  • ورزش کو اپنا معمول بنائیں
  • سوتے وقت روشنی مدھم کر دیں یا اپنا کمرہ بہت زیادہ ٹھنڈا یا گرم نہ رکھیں

ہر رات مقرر وقت پر بستر کا رخ کریں اگر ممکن ہو تو اس وقت سے پہلے ہی سونے کی کوشش کریں تاکہ آپ ایک بھرپور نیند لے سکیں

نیند

  • الارم کلاک کے بغیر جاگنے کی عادت ڈالیں
  • سونے سے پہلے موبائل اور ٹی وی آف کر نا مت بھولیں ‏
(Visited 2 times, 1 visits today)

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں