امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا میڈیکل چیک اپ والٹر ریڈ نیشنل ملٹری میڈیکل سینٹر میں جمعہ کے روز ہوگا۔ آج کل

امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا میڈیکل چیک اپ

میڈیا میں صدر ٹرمپ کے دماغی توازن ٹھیک نہ ہونے سے متعلق پروپیگنڈا کیا گیا جب کہ صدرذہین اور فوری فیصلہ ساز ہیں، نائب پریس سیکرٹری
تفصیلات کے مطابق گزشتہ چند روز سے امریکی میڈیا میں ڈنلڈ ٹرمپ کی ذہنی حالت  ٹھیک نہ ہونے پر خبریں گردش میں ہیں ۔

اسی حوالے سے وائٹ ہاوس کے نائب پریس سیکرٹری ہوگن گڈلے نے  میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہاہے کہ امریکی صدر ٹرمپ کا سالانہ میڈیکل چیک اپ جمعے کو ہوگا۔طبی معائنے میں دماغی معائنہ شامل نہیں۔

غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق گزشتہ روز وائٹ ہاوس میں امریکی اخبار سے گفتگو میں انہو ں نے کہا کہ میڈیا میں صدر ٹرمپ کے دماغی توازن ٹھیک نہ ہونے سے متعلق پروپیگنڈا کیا گیا جب کہ صدرذہین اور فوری فیصلہ ساز ہیں۔ٹرمپ کا طبی معائنہ والٹر ریڈ نیشنل ملٹری میڈیکل سینٹر میں جمعے کوہوگا۔وائٹ ہاوس کے نائب پریس سیکریٹری ہوگن گڈلے کاکہنا تھا کہ میڈیا ٹرمپ کی ذہنی کیفیت کو منفی طور پر بڑھا چڑھا کے پیش کررہا ہے لیکن حقیقت میں ایسا نہیں ہے ۔صدر ٹرمپ سیاست کے ساتھ ساتھ دیگر شعبوں میں بھی کافی مہارت رکھتے ہیں۔ہوگن گڈلے نے ماہرین نفسیات پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ جو ڈاکٹرز صدر ٹرمپ کی ذہنی کیفیت سے آگاہ نہیں اور نہ کبھی ان سے ملے انہیں ایسے بیانات سے گریز کرنا چاہیں۔

یاد رہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ نے پچھلے سال صدارتی الیکشن کے دوران بھی اپنے ڈاکٹر کی طرف  سے دیا گیا ایک لیٹر شائع کیا تھا۔ جس میں کہا گیا تھا کہ ڈونلڈ ٹرمپ جسمانی طور پر مکمل صحت مند ہیں۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں