لیبیا کے ساحل پر 2 کشتیاں ڈوبنے سے 20 بچوں سمیت 100 سے زائد تارکین وطن ہلاک

کشتیاں

طرابلس: لیبیا کے ساحل پر دو کشتیاں ڈوبنے کے نتیجے میں 20 بچوں سمیت 100 سے زائد تارکین وطن ہلاک ہو گئے ہیں، ہلاک ہونے والے افراد کا تعلق سوڈان، مالی، نائجیریا، کیمرون، گھانا اور مصر سے تھا۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق لیبیا کے ساحل پر دو کشتیاں ڈوبنے کے نتیجے میں 20 بچوں سمیت 100 سے زائد تارکین وطن ہلاک ہو گئے ہیں، دونوں بدقسمت کشتیاں رواں ماہ  یکم ستمبر کو روانہ ہوئی تھیں۔

واضح رہے کہ ماضی میں بھی ایسے کئی حادثات رونما ہوچکے ہیں جب کشتی میں گنجائش سے زائد افراد کے سوار ہونے سے وہ ڈوب گئیں اورسینکڑوں افراد جان کی بازی ہار گئے۔

عالمی ذرائع ابلاغ کے مطابق ایشیا اورفریقہ سے غیرقانونی طور پر یورپ جانے کے خواہش مند انسانی سمگلروں کے ذریعے لیبیا کے ساحلوں کا سہارا لیتے ہیں اوراکثر و بیشتر غیر محفوظ کشتیوں، گنجائش سے زائد افراد کی موجودگی اورسکیورٹی فورسز کی نقل و حرکت کے سبب حادثات کا نشانہ بن جاتے ہیں۔

یاد رہے کہ رواں برس فروری میں بھی ملازمت کے لیے یورپ جانے کے خواہش مند تارکین وطن کی ایک کشتی لیبیا کے ساحل پر ڈوب گئی تھی جس میں آٹھ پاکستانی بھی شامل تھے۔

Comments

comments

مزید پڑھیں۔  چوہدری نثار کو ’جیپ‘ کا انتخابی نشان الاٹ کردیا گیا

اپنا تبصرہ بھیجیں