قومی ہاکی ٹیم کو بہتر نتائج پیش کرنے کے لیے سخت محنت کی ضرورت

ہاکی

کراچی: قومی ہاکی ٹیم کے سابق کپتان اور اپنے دور کے عظیم کھلاڑی اولمپئن سمیع اللہ خان نے کہا ہے کہ ایشین گیمز میں قومی ہاکی ٹیم کو بہتر نتائج یور بہتر کارکردگی پیش کرنے کے لیے سخت محنت کی ضرورت ہے۔

دنیائے ہاکی میں فلائنگ ہارس کے نام  سے پکارے جانے والے اولمپئن سمیع اللہ خان نے کہا ہےکہ ایشین گیمز میں قومی ہاکی ٹیم پہلی پوزیشن حاصل کرکے براہِ راست اولمپکس کیلیے کوالیفائی  کرسکتی ہے لیکن یہ ایک مشکل مرحلہ ہوگا جس کے لیے  بھرپور محنت کرنا ہوگی۔

انھوں نے کہا کہ یہ امر قابل فخر ہے کہ پاکستان کو ایشین گیمز  میں7بار گولڈ میڈل حاصل کرنے کا اعزاز حاصل ہے، پہلی بار گرین شرٹس نے 1958کے ٹوکیو گیمز میں طلائی تمغہ حاصل کیا تھا اس کےبعد جکارتہ، بنکاک، نیو دہلی، بیجنگ، تہران، گوانگزو گیمز میں بھی پاکستان نے ہاکی میں گولڈ میڈل حاصل کیا، اس کے علاوہ قومی ہاکی ٹیم کو 3 بار چاندی کا تمغہ حاصل کرنے کا بھی اعزاز حاصل ہے۔

loading...

چین کے وفد کے سربراہ مسٹر جیانشن ماؤ نے اس موقع پر اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے  کہا کہ پاکستان میں اسپورٹس کا بہترین ٹیلنٹ موجود ہے، کھلاڑیوں کو اگر سہولتیں فراہم کی جائیں تو وہ اپنے ملک کیلیے بہترین خدمات پیش کرسکتے ہیں۔

سائٹا پاکستان کے سی ای او پیرزادہ اجمل فاروقی نے کہا کہ ایشین گیمز میں قومی ہاکی ٹیم سے کامیابی کیلیے پوری قوم کو امیدیں وابستہ ہیں اور وہ دعا کرتے ہیں کہ قومی ہاکی ٹیم ایشین گیمز میں پہلی پوزیشن حاصل کر ے۔اس موقع پر مسٹر جیانشی و دیگر بھی موجود تھے۔

مزید پڑھیں۔  بلاول بھٹو زرداری الیکشن مہم کے سلسلہ میں کل سے سندھ میں انتخابی مہم کا آغازکریں گے

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں