ٹرمپ اور نوبیل انعام

رپبلکن

صدر ٹرمپ نوبیل انعام کے لیے نامزد کیے جا سکتے ہیں،ٹرمپ شمالی کوریا کوامن میز پر لائے اس لیے نوبیل انعام کے حقدارہیں،رکن ری پبلکن ایڈوائزری کمیٹی

واشنگٹن: شمالی کوریا کو ایٹمی پروگرام ترک کرنے پر آمادہ کرنے اور اسے مذاکرات کی میز پر لانے کی ٹرمپ کی کوششوں کو ان کی ایک اہم کامیابی تصور کیا جا رہا ہے۔ اور رپبلکن پارٹی انہیں امن کے نوبیل انعام کے لئے نامزد کرنا چاہتی ہے۔

میڈیارپورٹس کی معلومات کے مطابق رپبلکن پارٹی کی سینیئر ایڈوائزری کمیٹی کے رکن اور شکاگو کے ایک مضافاتی علاقے کے پولیس کمشنر طلعت رشیدکا کہنا ہےکہ صدر نے ٹیکسوں کے نظام میں جن اصلاحات کا اعلان کیا ہے اس سے کمپنیوں کی حالت بہت بہتر ہوئی ہے، معیشت کو ترقی ملی ہے اور ملازمتوں کے نئے مواقع پیدا ہوئے ہیں۔ صدر ٹرمپ اعلان کر چکے ہیں کہ وہ 12 جون کو سنگاپور میں شمالی کوریا کے لیڈر کم جانگ اْن کے ساتھ ملاقات کریں گے۔

loading...

 شمالی کوریا کو ایٹمی پروگرام ترک کرنے پر آمادہ کرنے اور اسے مذاکرات کی میز پر لانے کی ٹرمپ کی کوششوں کو ان کی ایک اہم کامیابی تصور کیا جا رہا ہے۔ اور رپبلکن پارٹی انہیں امن کے نوبیل انعام کے لئے نامزد کرنا چاہتی ہے۔ رپبلکن پارٹی کے سرگرم کارکن طلعت رشید اسے خوش آئند قرار دیتے ہیں۔ رپبلکن تو یہ بھی امید رکھتے ہیں کہ ٹرمپ اگلی مدت کے لئے بھی صدر منتخب ہو جائیں گے کیونکہ ڈیموکریٹس کے پاس کوئی نمایاں امیدوار ابھی تک نہیں ہے۔

Comments

comments

مزید پڑھیں۔  واٹس ایپ نے 2نئے فیچر ز متعارف کروا دیے

اپنا تبصرہ بھیجیں