یوگی ادتیہ کا تاریخی شہر الہٰ آباد کا نام تبدیل کرنے کا اعلان

الہٰ آباد

اترپردیش: بھارت کی حکمراں جماعت کے وزیراعلیٰ یوگی ادتیہ ناتھ نے تاریخی شہر الہٰ آباد کے نام کو تبدیل کرنے کا اعلان کردیا۔

تفصیلات کے مطابق بھارت میں مسلمانوں اور تاریخی عمارتوں کے بعد اب تاریخی شہربھی ہندو انتہا پسندوں کے نشانے پر آگئے، ریاست اتر پردیش کے وزیراعلیٰ یوگی ادتیہ نے تاریخی شہر الہٰ آباد کے نام کو تبدیل کرنے کا عندیہ دے دیا۔

بھارتیہ جنتا پارٹی سے تعلق رکھنے والے ہندو انتہا پسند وزیراعلیٰ یوگی ادتیہ ناتھ کا کہنا تھا کہ، اگر اکثریت حاصل ہوگئی تو جلد الہٰ آباد کا نام  تبدیل کرکے پرایا گرج رکھا جائے گا کیونکہ بھارت کے تمام شہر اب ہندو ثقافت کی عکاسی کریں گے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق اترپردیش کے وزیر اعلیٰ رواں سال 30 نومبر کو شروع ہونے والے کنبھ  میلے سے قبل الہٰ آباد کا نام  تبدیل کرکے مودی کی خوشنودی حاصل کرنا چاہتے ہیں کیونکہ بھارتی وزیراعظم کو اس میلے کا افتتاح کرنا ہے۔

دوسری جانب اپوزیشن جماعت کانگریس نے یوگی ادتیہ کے اعلان پر شدید احتجاج کرتے ہوئے کہا ہے کہ تہذیبی اور تاریخی اعتبار سے مشہور الہٰ آباد کا نام بدلنے سے علاقے کی پہچان متاثر ہوگی اور اس کا اثر تعلیمی و معاشی سرگرمیوں پر بھی پڑے گا۔

واضح رہے کہ یوگی آدیتیہ ناتھ نے اترپردیش کا وزیراعلی بننے کے بعد مسلمانوں کا جینا محال کررکھا ہے، پہلے حکومت نے گائے کے گوشت پر پابندی عائد کی اُس کے بعد تاریخی تاج محل کو مسلمانوں کی ثقافت کا حصہ ماننے سے انکار کرتے ہوئے اسے عام عمارت قرار دیا تھا۔

گنگا جمنا کے سنگم پر آباد الہٰ آباد کو بھارت کی ریاست اترپردیش کا قدیم شہر ہونے کا اعزاز حاصل ہے، یہاں تجارتی مراکز، ہندوؤں کا مقدس مقام اور ریلوے کا بہت بڑا جنکشن موجود ہے۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں