امریکی سفارتخانہ ایک سال کے اند ر القدس منتقل کر دیا جائے گا، نیتن یاہو، ایک سال کے اند ر سفارتخانہ منتقل نہیں ہو سکتا، ڈونلڈ ٹرمپ

loading...

امریکی صدر کی جانب سے فلسطینی متنازعہ علاقہ القدس کو اسرائیلی دارلحکومت تسلیم کیا گیاتھا ، اسی حوالے سے اسرائیلی وزیر اعظم نے بیا ن دیا تھا کہ امریکی سفارتخانہ بہت جلد القدس منتقل ہو جائے گا، لیکن ڈنلڈ ٹرمپ نے اسرائیلی وزیر اعظم کی  امید توڑ دی
تفصیلات کے مطابق امریکی صدر کی جانب سے فلسطینی متنازعہ علاقہ القدس کو اسرائیلی دارلحکومت تسلیم کیا تھا اور امریکی سفارتخانہ القدس منتقل کرنے کی امید ظاہر کی تھی ، اسی حوالے سے اسرائیلی وزیر اعظم نے بیا ن دیا تھا کہ امریکی سفارتخانہ بہت جلد القدس منتقل ہو جائے گا، لیکن ڈنلڈ ٹرمپ نے اسرائیلی وزیر اعظم کی  امید توڑ دی، اور کہاہے کہ ایک سال کے اندر سفارت خانے کی منتقلی ممکن نہیں ہے۔غیرملکی خبررساں ادارے کے مطابق اپنے ایک تازہ ٹوئیٹ میں کہاکہ یہ کام آسان نہیں ہے اورایک سال کے اندر سفارت خانے کی منتقلی نہیں کرسکتے، اسرائیلی وزیراعظم نے اس خوش خیالی کا اظہار کیا تھا کہ امریکی سفارتخانے کی منتقل کا کام سب کی سوچوں سے تیز اور اب سے ایک سال کے اندر ہوگا۔لیکن جب امریکی صدر ٹرمپ کے سامنے نیتن یاہو کا بیان رکھا گیا تو انہوں نے اس کی تردید کردی۔اس سے پہلے امریکی وزیرخارجہ ریکس ٹلرسن نے کہا تھا کہ 3 سال سے کم عرصے میں سفارتخانے کی القدس منتقلی ممکن نہیں ہوگی۔ (ذرائع این این آئی)

Comments

comments

مزید پڑھیں۔  احمدیار،مسلح افراد نے مختلف مقامات سے شادی شدہ اور نوجوان کو اغواء کرلیا، اوباش نوجوان نے ساتھیوں سے ملکر19 سالہ دوشیزہ کوہوس کا نشانہ بناڈالا، احمدیارگھریلو حالات سے دلبرداشتہ45 سالہ شخص نے خودکشی کرلی

اپنا تبصرہ بھیجیں