ن لیگ کا معطل اراکین کی بحالی تک پنجاب اسمبلی کے باہر دھرنے کا اعلان

پنجاب اسمبلی

لاہور: مسلم لیگ (ن) کی جانب سے 6 اراکین کے ایوان میں داخلے کے خلاف پنجاب اسمبلی کے باہر احتجاج کیا جارہا ہے۔

16 اکتوبر کو بجٹ اجلاس کے دوران ایوان میں بدنظمی کے بعد اسپیکر نے (ن) لیگ کے 6 اراکین کے آج کے لیے ایوان میں داخلے پر پابندی عائد کردی تھی۔ پابندی کے حامل ارکان میں محمد اشرف رسول، محمد وحید، یاسین عامر، مرزا جاوید، زیب النساء اور طارق مسیح شامل ہیں۔

پابندی کے حامل 6 ارکان کی تصاویر بھی اسمبلی سیکیورٹی اسٹاف کو جاری کی گئی ہیں اور سرکلر میں کہا گیا ہے کہ مسلم لیگ (ن) کے مذکورہ 6 ارکان آج ایوان میں آنے نہ پائیں۔

loading...

پنجاب اسمبلی میں دو روز کے وقفے کے بعد آج بجٹ پر بحث کا آغاز ہوگا تاہم (ن) لیگ نے ایوان میں نہ جانے کا فیصلہ کیا ہے اور اسمبلی کی سیڑھیوں پر احتجاج کیا۔

یاد رہے کہ 16 اکتوبر کو صوبائی وزیرخزانہ پنجاب مخدوم ہاشم بخت نے رواں سال کا بجٹ پیش کیا تو اس موقع پر اپوزیشن کی جانب سے شدید احتجاج کیا گیا۔
مشتعل اپوزیشن اراکین نے بجٹ کی کاپیاں پھاڑ دیں اور اسپیکر کی ڈائس کے قریب فرنیچر کو بھی نقصان پہنچایا۔

Spread the love
  • 2
    Shares

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں