شاعر مشرق ڈاکٹر علامہ محمد اقبال برصغیر کی ایسی تابناک شخصیت تھیں جن پر ملت اسلامیہ ہمیشہ فخر کرتی رہے گی‘صدر آزاد کشمیر

علامہ اقبال

شاعر مشق نے کشمیری عوام کے اضطراب اور زبوں حالی کا خاص طور پر ذکر کیا ان کے کلام میں جا بجا کشمیری مسلمانوں کی غلامی کا ذکر موجود ہے‘سردار محمد مسعود خان

مظفر آباد:صدر آزاد جموں و کشمیر سردار محمد مسعود خان کا کہنا ہے کہ شاعر مشرق ڈاکٹر علامہ محمد اقبال برصغیر کی ایسی تابناک شخصیت تھیں جن پر ملت اسلامیہ ہمیشہ فخر کرتی رہے گی ۔ وہ بڑے فلسفی اور عظیم شاعر ہونے کے علاوہ ایک ماہر قانون دان اور صاحب بصیرت سیاستدان بھی تھے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے حضرت علامہ اقبال کی برسی کے موقع پراپنے خصوصی پیغام میں کیا ۔صدرآزاد کشمیر سردار محمدمسعود خان نے کہا کہ مصور پاکستان حضرت ڈاکٹر محمد اقبال امت مسلمہ کے حقیقی مصلخ اور بہی خواہاں تھے۔اپنے کلام کے ذریعہ جہاں ساری دنیا کے مسلمانوں کو ان کی عظمت رفتہ کی یاد دلاتے ہوئے نئی زندگی کے نئے تقاضوں میں سرگرم حصہ لینے کیلئے آمادہ کیا وہی پر انہوں نے کشمیری عوام کے اضطراب اور زبوں حالی کا خاص طور پر ذکر کیا ان کے کلام میں جا بجا کشمیری مسلمانوں کی غلامی کا ذکر موجود ہے۔

ڈاکٹر علامہ محمد اقبال نے اپنے کلام کے ذریعہ کشمیرکی حالت زار پر فارسی اور اردو کلام میں نہ صرف دکھ کا اظہار کیا بلکہ ان کے دکھوں کا موثر عندیہ بھی دیا ۔ انہوں نے کہا کہ باہمی اتفاق و اتحاد کے ذریعہ ہی اپنا کھویا ہوا مقام حاصل کر سکتے ہیں ۔ چنانچہ مسلمانوں کو زندگی کے ہر موڑ پر سخت محنت اور ریاضت سے کام کرنے اور دوسروں کے سامنے سرنگوں ہونے سے بچنے کی تلقین کی۔

مزید پڑھیں۔  گوگل امریکی فوج کی مدد نہ کرے، 3100 گوگل ملازمین کا کمپنی کو خط

یہ علامہ اقبال کے کلام اور تعلیمات ہی کا اعجاز تھا کہ کشمیری عوام نے ایک ایسے وقت میں پاکستان کے ساتھ الحاق کی تاریخی قرارداد منظور کی جب ابھی پاکستان منصہ شہود ہی پر نہیں آیا تھا ۔کشمیری عوام اپنی جد وجہد شد ومد سے جاری رکھے ہوئے ہیں اور انشاء اللہ وہ دن زیادہ دور نہیں جب وہ اپنی جد وجہد میں کامیاب ہونگے ۔

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں