پاکستان کے مختلف علاقوں میں 5.3 شدت کا زلزلہ

زلزلہ

پشاور: خیبرپختونخواہ کے مختلف اضلاع اور پہاڑی علاقوں میں زلزلے کے شدید جھٹکے محسوس کیے گئے جن کی ریکٹر اسکیل پر شدت 5.3 ریکارڈ کی گئی۔

اطلاعات کے مطابق پاکستان کے دارالحکومت اسلام آباد، روالپنڈی کے علاوہ صوبے خیبرپختونخواہ کے متعدد علاقوں بٹ خیلہ، بونیر، مالاکنڈ، لوئر دیر، ہری پور، چترال اور پہاڑی سلسلے میں شامل ملحقہ علاقوں میں کچھ دیر قبل زلزلے کے شدید جھٹکے محسوس کیے گئے۔

زلزلہ پیما مرکز کے مطابق زلزلے کا مرکز کوہ ہندوکش تاجکستان اور چین کا سرحدی علاقہ تھا جس کی گہرائی 120 کلومیٹر جبکہ شدت 5.4 ریکارڈ کی گئی۔

زلزلے کے بعد شہری خوف زدہ ہوکر کلمہ طیبہ کا ورد کرتے ہوئے کھلے مقامات پر آگئے، خوش قسمتی سے پاکستان کے کسی بھی علاقے میں کوئی جانی یا مالی نقصان نہیں ہوا۔

جس وقت زلزلہ آیا وزیر اعظم عمران خان کی زیر صدارت اسلام آباد میں اجلاس جاری تھا، جھٹکے محسوس ہونے کے بعد متعدد وزراء اور تحریک انصاف کے رہنما اپنی نشستوں سے کھڑے ہوگئے۔

رہنماؤں کے اصرار اور سکیورٹی حکام کی درخواست کے باوجود وزیراعظم عمران خان نے زلزلے کے باوجود اجلاس جاری رکھا اور بریفنگ روم سے باہر نہیں نکلے۔

وزیراعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ جہاں جاؤں گا وہاں پر بھی زلزلہ ہی ہوگا۔ اس صورتحال کو دیکھنے کے بعد پارٹی رہنما دوبارہ اپنی نشستوں پر بیٹھ گئے۔

Spread the love
  • 1
    Share

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں