کراچی: قومی اسمبلی کے حلقے این اے 247 اور پی ایس 111 پر ضمنی انتخاب کل ہوگا

پی بی 47

کراچی سے قومی اسمبلی کے حلقہ این اے 247 پر صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے عام انتخابات میں کامیابی حاصل کی تھی جب کہ پی ایس 111 پر گورنر سندھ عمران اسماعیل فاتح قرار پائے تھے تاہم عارف علوی اور عمران اسماعیل کے منصب سنبھالنے کے بعد یہ نشستیں خالی ہوئیں جن پر کل ضمنی انتخاب کے لیے تیاریاں جاری ہیں۔

پاکستان تحریک انصاف نے این اے 247 پر آفتاب صدیقی، ایم کیوایم کی طرف سے این اے 247 پر صادق افتخار، پیپلزپارٹی کے قیصر نظامانی اور پی ایس پی کے ارشد وہرہ میدان میں ہیں۔

پی ایس 111 پر تحریک انصاف کے شہزاد قریشی، پی ایس پی کے یاسرالدین، ایم کیوایم پاکستان کےجہانزیب مغل، پیپلزپارٹی کے فیاض پیر زادہ مد مقابل ہوں گے جب کہ  آزاد امیدوار جبران ناصر بھی میدان میں ہیں۔

حلقے میں ضمنی انتخاب کل ہوگا جس کے لیے پولنگ کے سامان کی ترسیل فوج کی نگرانی میں جاری ہے۔

 گورنمنٹ کامرس اینڈ اکنامکس کالج سے پولنگ کے سامان کی ترسیل کا عمل جاری ہے اور کالج میں پولیس، فوج کی نفری موجود ہے جب کہ پولنگ سامان کی ترسیل کے باعث کالج میں تدریسی عمل بھی معطل ہے۔

الیکشن کمیشن کے مطابق این اے247 میں رجسٹرڈ ووٹرز کی تعداد 5 لاکھ 46 ہزار 451 اور پی ایس 111 میں تعداد  ایک لاکھ 78ہزار 965 ہے۔

الیکشن کمیشن نے بتایا کہ  این اے 247 کے لیے 240 پولنگ اسٹیشنز اور پی ایس 111 کے لیے 80 پولنگ اسٹیشنز بنائے گئے ہیں جب کہ پولنگ کا عمل صبح 8 سے شام 5 بجے تک جاری رہے گا۔

الیکشن کمیشن کے مطابق این اے247 میں 12 امیدوار حصہ لے رہے ہیں اور پی ایس 111 میں 16 امیدوار میدان میں ہیں۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں