بابا وانگا کی دنیا سے متعلق بڑی پیش گوئیاں

بابا وانگا

بلغاریہ کی نابینا خاتون بابا وانگا اپنی پیش گوئیوں کی وجہ سے شہرت رکھتی ہیں۔ انہوں نے نائن الیون، برطانیہ کے یورپی یونین سے انخلاءاور عرب بہار سمیت کئی عالمی معاملات کی سالوں قبل پیش گوئیاں کیں جو من و عن درست ثابت ہوئیں۔

باباوانگا کی پیش گوئیوں کی طرح ان کی زندگی بھی حیرت کا نمونہ ہے، جو انتہائی کم عمری میں ایک حادثے کا شکار ہو کر نابینا ہو گئیں لیکن اس سے انہیں وہ پراسرار طاقتیں حاصل ہو گئیں جن کی بدولت انہوں نے پیش گوئیاں کیں۔
بابا وانگا نے 2019 میں امریکی و روسی صدور سمیت یورپ اور ایشیا کے لیے بھی خطرے کی گھنٹیاں بجا دی ہیں۔ بابا وانگا نے روسی صدر ولادی میر پیوٹن پر قاتلانہ حملہ اور امریکی صدر ٹرمپ کے پر اسرار بیماری کا شکار ہو کر قوت سماعت سے محروم ہونے کی پیشین گوئی کی ہے۔

2004 میں سونامی کی پیش گوئی کرنے والی وانگا نے ایشیا میں ایک اور سونامی کا بتاتے ہوئے کہا تھا کہ اس سونامی میں پاکستان، بھارت، جاپان اور انڈونیشیا سمیت کئی ملکوں کو نقصان پہنچے گا۔ اس کے علاوہ نابینہ بلغارین خاتون نے مستقبل کے رازوں سے پردہ اٹھاتے ہوئے 2019 میں ایشیا میں ایک اور طاقتور سونامی اور یورپی یونین میں ٹوٹ پھوٹ کے علاوہ شہاب ثاقب کے روس سے ٹکرانے کی پیش گوئی بھی کی ہے۔

بابا وانگا کی 2019 کی پیش گوئیوں کے علاوہ مزید اگلے برسوں کی پیش گوئیوں کے مطابق 2043 میں مسلمان یورپ پر غالب آجائیں گے اور خلافت قائم ہو گی جس کا مرکز روم ہو گا۔

برطانوی اخبار کی جانب سے جاری کی گئی بابا وانگا کی پیش گوئیوں کے مطابق روسی صدر ولادی میر پیوٹن کو ان کی سکیورٹی ٹیم کا اہلکار انہیں ہلاک کرنے کی کوشش کرے گا۔ خیال رہے کہ پیوٹین خود بھی یہ انکشاف کر چکے ہیں کہ انہیں مارنے کی کئی بار کوششیں کی جا چکی ہیں۔

پیوٹن نے اپنی حفاظت کے لیے اسنائپرز کی ٹیم مقرر رکھی ہے، جس کا مشورہ انہیں 50 قاتلانہ حملوں میں محفوظ رہنے والے کیوبا کے رہنما فیڈل کاسترو نے دیا تھا۔ٹرمپ کے بارے میں بابا وانگا کا کہنا تھا کہ 2019 میں وہ پرسرار بیماری کا شکار ہو جائیں گے، جس میں وہ قے آنے سے کمزور ہو جائیں گے۔

ان کے کانوں میں بھنبھناہٹ ہوتی رہے گی اور وہ قوت سماعت سے محروم ہو جائیں گے، یہ محرومی انہیں ذہنی صدمے سے بھی دوچار کر دے گی ۔قدرتی آفات کے علاوہ وانگا نے یہ بھی کہا تھا کہ 2019 میں یورپی یونین ٹوٹ جائے گی اور شہاب ثاقب روس سے ٹکرا جائے گا۔ بلغاریہ سے تعلق رکھنے والی نابینا خاتون بابا وانگا کا انتقال 1996 میں ہو گیا تھا۔

مرنے سے قبل وہ کئی دہائیوں کی پیش گوئیاں کر گئی تھیں۔بابا وانگا کی گزشتہ پیش گوئیوں میں 2001 میں ورلڈ ٹریڈ سینٹر پر حملہ اور 2004 میں سونامی، 2010 میں سیاہ فام امریکی شہری کا امریکی صدر بننا اور اسی سال عرب دنیا میں تحریکوں کا اٹھنا اور 2018 میں چین دنیا کی سپر پاور بن جانا شامل ہیں۔

بلغارین خاتون کی پیشین گوئی کے مطابق 2154 میں جانور آدھے انسان بن جائیں گے اور 5079 میں دنیا کا خاتمہ ہو جائے گا۔

loading...

Spread the love
  • 4
    Shares

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں