احد رضا میر اور مومنہ مستحسن کے”کوکو کورینا” پر شیریں مزاری کی شدید تنقید

کوکو کورینا

احد اور مومنہ کے’کوکو کورینا‘ پر شریں مزاری کی شدید تنقید

وفاقی وزیر برائے انسانی حقوق شیریں مزاری کی جانب سے پاکستانی اداکار احد رضا میر اور گلوکارہ مومنہ مستحسن کو لیجنڈری گانے ’کوکو کارینا‘ کو تباہ  کرنے پر شدید تنقید کا نشانہ بنایا گیا ہے۔

پاکستانی میوزیکل شو کوک اسٹوڈیوکا نیا گانا ’کوکو کورینا‘ سننے کے بعد سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے شیریں مزاری نے لکھا کہ ’خوفناک! ایک عظیم کلاسک کو تباہ کر دیا گیا۔

کوک اسٹودیو نے اس کلاسک گانے کے اس طرح سے قتل عام کی اجازت آخر کیوں دی؟

احد رضا میر کا کوک اسٹوڈیو کے سیزن 11 میں ڈیبیو گانا ’کوکو کورینا‘ 19 اکتوبر کو ریلیز ہوا تھا جس میں ان کے ساتھ گلوکارہ مومنہ مستحسن نے گلوکاری کی ہے۔ اس گانے کے منظر عام پر آتے ہی احد رضا میر اور مومنہ مستحسن پر شدید تنقید کی جارہی ہے۔

سوشل میڈیا پر نا صرف احد رضا میر اور مومنہ مستحسن پر تنقید جاری ہے بلکہ کوک اسٹوڈیو سیزن 11 کے پروڈیوسرز زوہیب قاضی اور علی حمزہ کو بھی کھری کھری سنائی جارہی ہے۔ صارفین کا کہنا ہے کہ اگر احد رضا میر اور مومنہ مستحسن اسٹائل سے زیادہ اپنی گلوکاری پر توجہ دیتے تو زیادہ بہتر ہوتا۔

یاد رہے ’کوکو کورینا‘  لیجنڈری چاکلیٹی ہیرو وحید مراد پر فلمایا گیا تھا جسے احمد رشدی نے گایا تھا اور یہ آج تک مقبول ہے۔ کوک اسٹوڈیو میں پیش کیا گیا اس گانے کا ریمیک ورژن مداحوں کو متاثر کرنے میں ناکام ہوگیا۔

ٹوئٹر پر ایک احمر علی خان نامی صارف نے لکھا کہ ’یہ کوک اسٹوڈیو کے اس سیزن کا سب سے بد ترین گانا تھا۔‘ عائشہ نامہ صارف کا کہنا تھا کہ کوک اسٹوڈیو آپ نے ایک لیجنڈری گانے کا کیا حال کر دیا ہے؟ لیجنڈز کے گانوں کے کو تباہ کرنا چھوڑ دیں جب تک کہ آپ کے پاس پیش کرنے کے لیے کوئی بہترین چیز نہ ہو۔

Spread the love
  • 6
    Shares

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں