وزیراعظم: چینی قونصلیٹ، اورکزئی حملے ملک میں بے امنی پھیلانے کی سازش ہیں

وزیراعظم عمران خان
loading...

وزیراعظم عمران خان نے کراچی میں چینی قونصلیٹ اور اورکزئی حملے کی مذمت کرتے ہوئے کہاہے کہ حملے ملک میں بے امنی پھیلانے کی سوچی سمجھی سازش ہیں۔

وزیراعظم عمران خان نے کراچی میں چینی قونصلیٹ پر حملے کی فوری تحقیقات کا حکم دیا اور اپنے بیان میں کہا کہ حملے کے پیچھے موجود عناصر اور محرکات کو فوری بے نقاب کیاجانا چاہیے۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ حملہ پاک چین معاشی اور اسٹریٹیجک تعاون کے خلاف سازش ہے، لیکن اس طرح کے واقعات دونوں ملکوں کے تعلقات کو متاثر نہیں کرسکتے۔ پاک چین دوستی ہمالیہ سےبلند اور سمندروں سے گہری ہے۔
وزیراعظم کا کہنا تھا کہ پولیس اور رینجرز نے انتہائی بہادری کا مظاہرہ کرتے ہوئے مستعدی کے ساتھ دہشت گرد حملہ ناکام بنایا جس پر پوری قوم کو فخر ہے۔

دوسری جانب وزیراعظم نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پراورکزئی بن دھماکے کی شدید مذمت کی۔ وزیراعظم نے کہا کہ چینی قونصلیٹ پر ناکام حملہ ہمارے دورۂ چین میں مثالی تجارتی معاہدوں کاردعمل ہے، حملے کامقصد چینی سرمایہ کاروں کو خوف زدہ کرنا اور سی پیک کے لیےغیریقینی صورت حال پیدا کرنا ہے، قونصل خان پر حملہ ناکام بنانے والے سیکیورٹی اہلکاروں کو سلام پیش کرتا ہوں، سیکیورٹی اہلکاروں نےجانوں کا نذرانہ دے کر دہشت گردوں کے مقاصد ناکام بنائے۔

عمران خان نے مزید کہا کہ دونوں حملے ملک میں بےامنی پھیلانےکی سوچی سمجھی سازش ہیں، دہشت گرد کبھی اپنے مقصد میں کامیاب نہیں ہوں گے، چاہے جو ہو جائے، دہشت گردوں کو شکست فاش دے کر رہیں گے۔

وزیراعظم کا کہنا تھا کہ یہ سازشیں وہ قوتیں کررہی ہیں جو پاکستان کو پھلتا پھولتا نہیں دیکھ سکتیں۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں