تقریر عورت کی اسکرٹ کی طرح ہوتی ہے، چیف جسٹس نے معذرت کر لی

cheif jusitce-speech-aajkal-jpg

چیف جسٹس پاکستان ثاقب نثار نے اپنی تقریر میں عورت کی اسکرٹ کے حوالے سے کی گئی اپنی بات پر معذرت کر لی۔

چیف جسٹس پاکستان نے اپنی بات کی وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے تقریر میں ونسٹن چرچل کے قول کا حوالہ دیا تھا۔ اگر ان کی بات سے کسی کی دل آزاری ہوئی ہے تو وہ معذرت خواہ ہیں۔

چیف جسٹس نے اپنے بیان کی وضاحت کراچی میں ایک کیس کی سماعت کے دوران کی۔

چیف جسٹس کا کہنا تھا ان کا مقصد کسی کی دل آزاری کرنا نہیں تھا۔ سوشل میڈٰیا پر اس بات کا ایشو بنانے کی کوشش کی گئی۔

یاد رہے کہ چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے 13 جنوری کو اپنی ایک تقریر میں کہا تھا کہ تقریر عورت کی اسکرٹ کی طرح ہوتی ہے۔ اگر لمبی ہو جائے کو ئی توجہ نہیں دیتا۔ اور اگر اسکرٹ چھوٹی رہ جائے تو سبجیکٹ کور نہیں کرتی۔

اس کے بعد سوشل میڈیا پر سخت رد عمل سامنے آٰیا تھا۔  فکری حلقوں کی جانب سے بھی چیف جسٹس کے اس بیان کو ناپسند کیا گیا تھا۔

اور اسی حوالے سے حواتین وکلا کی جانب سے بھی اس بات پر احتاج کرتے ہوئے کہا گیا تھا۔ کہ چیف جسٹس اپنی گفتگو میں الفاظ کا چناو احتیاط سے کریں۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں