لالہ موسیٰ: چھوٹے بھائی نے بڑے بھائی کو ہتھوڑے کے وار کر کے قتل کردیا

ٹیکسلاماں اور3 بیٹیوں کا قتل

ملزم شہبازانصاری کی بے روزگاری کے باعث شادی نہی ہورہی تھی جس پر گھر والوں سے اکثر لڑتا جھگڑتا رہتا تھا، پولیس

چھوٹے بھائی نے شادی نہ ہونے پر بڑے بھائی کو لکڑی کے ہتھوڑے سے سر میں وار کرکے شدید زخمی کردیا بڑا بھائی چار روز موت وحیات کی کشمکش مبتلا ہوکر گذشتہ روز مر گیا پولیس نے ملزم کو گرفتار کرلیا۔ تفصیلات کے مطابق بتایاہے کہ ملزم شہبازانصاری کی بے روزگاری کے باعث شادی نہی ہورہی تھی جس پر گھر والوں سے اکثر لڑتا جھگڑتا رہتا تھا انہی جھگڑوں کی وجہ سے ماں اور باپ میں طلاق تک ہوگئی جبکہ سب سے بڑا بھائی اپنی بیوی کو لیکر سسرال چلا گیا۔

کچھ عرصہ قبل ملزم شہباز نے مقتول بھائی کی بیوی کو بھی زدوکوب کیا تھا اور گھر میں ہی دکان بھی کھولے رکھی تاہم ذہنی توازن خراب ہونے کی شہرت کے باعث دکان ٹھپ ہوگئی چار روز قبل بھی بڑے بھائی ارشد انصاری عرف باو جو کہ جستی چادروں سے پیٹاں بنانے کا کام کرتا تھا کی دکان پر جاکر اس سے لڑا اور سر میں لکڑ کے ہتھوڑے سے وار کردئیے جس سے ارشد انصاری شدید زخمی ہوگیا اور زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے ہلاک ہوگیا پولیس نے اہل خانہ کی رپورٹ پر ملزم کو گرفتار کرلیا جبکہ مقتول کو پوسٹ مارٹم کے بعد ہفتہ کے روز نماز جنازہ کے بعد سپرد خاک کردیا گیا۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں