پی ٹی وی کرپشن کیس: ڈاکٹر شاہد مسعود کا 5روزہ جسمانی ریمانڈ منظور

ڈاکٹر شاہد مسعود

اسلام آباد: پی ٹی وی کرپشن کیس میں ڈاکٹرشاہدمسعود کو پانچ روزہ جسمانی ریمانڈ پرایف آئی اے کے حوالے کردیا گیا، ایف آئی اے نے عدالت کو بتایا کہ ملزم نے خودسرینڈر نہیں کیا تھا، تفتیش میں کافی چیزیں باقی ہیں۔

تفصیلات کے مطابق پی ٹی وی کرپشن کیس میں ڈاکٹرشاہدمسعود کو ایف آئی اے ٹیم نے اسلام آباد کی سیشن عدالت میں پیش کیا اور عدالت سے ڈاکٹر شاہد مسعود کے 10 روزہ جسمانی ریمانڈ کی استدعا کی۔

24وکیل شاہدمسعود نے کہا 24 گھنٹے کا ریمانڈ کافی ہے، اس سےزیادہ نہ دیاجائے، عدالت نے ایف آئی اے سے استفسار کیا کہ کیا آپ نے انکوائری کرلی ہے؟ جس پر ایف آئی اے ملزم نے خود سرینڈر نہیں کیا تھا، تفتیش میں کافی چیزیں باقی ہیں۔

عدالت کا کہنا تھا کہ کیا یہ پہلاریمانڈہےیا اس سے پہلے بھی لیا گیا ہے، جس کے جواب میں ایف آئی اے نے بتایا کہ پہلا ریمانڈ ہے، کل ضمانت خارج ہونے کے بعد گرفتار کیا گیا۔

دوران سماعت پی ٹی وی کے وکیل نے ہائی کورٹ کے ریکارڈ کی دستاویز بھی پیش کیں اور کہا ہائی کورٹ نےملزم سے متعلق کچھ ہدایات دیں انہیں بھی دیکھ لیں۔

عدالت نے ایف آئی اے سے استفسار کیا کیا کوئی ایسا ریکارڈ بھی ہے جو آپ نےابھی جمع کرنا ہے، ایف آئی اے نے بتایا جی ہمیں کچھ مزیدمعلومات درکار ہیں۔

عدالت نے دلائل کے بعد ملزم کو ریمانڈ پر ایف آئی اے کے حوالے کردیا اور ڈسٹرکٹ اینڈسیشن کورٹ نے ڈاکٹرشاہدمسعود کو 5روز بعد دوبارہ پیش کرنےکا حکم دیا۔

یاد رہے گزشتہ روز ڈاکٹرشاہد مسعود کو اسلام آباد ہائی کورٹ سے ضمانت خارج ہونے پر ایف آئی اے نے گرفتار کرلیا تھا۔ خیال رہے 14 ستمبر کو وفاقی دارلحکومت اسلام آباد کی عدالت نے پی ٹی وی کرپشن کیس میں ڈاکٹر شاہد مسعود کی درخواست ضمانت مسترد کرتے ہوئے گرفتار کرکے پیش کرنے کا حکم دیا تھا۔

اس سے قبل یکم جون کو پی ٹی وی کرپشن کیس میں ڈاکٹر شاہد مسعود کے ناقابل ضمانت وارنٹ گرفتاری جاری کیے گئے تھے۔

واضح ررہے ڈاکٹر شاہد مسعود پر بہ طور چیئرمین پی ٹی وی کروڑوں کی کرپشن کا الزام ہے۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں