کوئٹہ خودکش دھماکے کا مقدمہ درج نہ ہوسکا، شہادتوں کی تعداد 31 ہوگئی

کوئٹہ

کوئٹہ کے علاقے مشرقی بائی پاس میں خودکش دھماکے کے نتیجے میں شہادتوں کی تعداد 31 ہوگئی جبکہ متعدد زخمی مختلف اسپتالوں میں زیر علاج ہیں۔

ترجمان اسپتال کے مطابق خودکش حملے کے 70 زخمیوں کو سنڈیمن صوبائی اسپتال میں منتقل کیا گیا تھا، جن میں سے 19 زخمیوں کو ڈسچارج کردیا گیا، 5 زخمیوں کو سی ایم ایچ اور 17 زخمیوں کو بی ایم سی اسپتال ریفر کردیا گیا جبکہ  29 زخمی سنڈیمن ہیڈکوارٹر اسپتال میں زیرعلاج ہیں۔

دوسری جانب حملے کا مقدمہ تاحال درج نہیں کیاجاسکا، تاہم حملے کی جگہ سے خود کش حملہ آور کے جسمانی اعضاء اور دیگر شواہد اکٹھے کرلیے گئے ہیں۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز کوئٹہ کے نواح میں مشرقی بائی پاس پر واقع تعمیرنو ایجوکیشنل کمپلیکس میں قائم پولنگ اسٹیشن کےباہر خود کش بم دھماکا ہوا تھا، جس کے نتیجے میں موقع پر موجود 6 پولیس اہلکار اور دو بچوں سمیت 29 افراد جاں بحق جب کہ 70 زخمی ہوگئے تھے۔

پولیس کے مطابق موٹرسائیکل پر سوار ایک مشتبہ شخص نے پولنگ اسٹیشن کے اندر جانے کی کوشش کی جس پر وہاں موقع پر موجود پولیس اور ایف سی اہلکاروں نے اسے روکا، تاہم روکنے پر اس شخص نے خود کو دھماکے سے اڑالیا۔

ایک عینی شاہد عزیز احمد نے بتایا کہ وہ ووٹ ڈالنے کے لیے آیا تھا کہ دھماکا ہوگیا،  جس کے بعد لوگ نیچے گرنے لگے۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں