آشیانہ سکینڈل اور پیراگون کیس میں اہم پیش رفت

آشیانہ سکینڈل
loading...

لاہور: آشیانہ اور پیراگون سکینڈل میں بڑی پیش رفت ہوئی ہے، قیصرامین بٹ سعدرفیق کےخلاف وعدہ معاف گواہ بن گئے۔

مرکزی ملزم قیصر امین بٹ کو ضلع کچہری میں مجسٹریٹ عامر رضا کی عدالت میں پیش کر دیا گیا، قیصر امین بٹ نے سیکشن 164 کا بیان مجسٹریٹ کے رو برو قلم بند کرادیا۔

قیصر امین بٹ کو مجسٹریٹ کی عدالت میں روسٹرم پر بلایا گیاتو مجسٹریٹ نے پوچھا آپ پر کوئی دباﺅ تو نہیں اس قیصر امین بٹ نے کہا کہ مجھ پر کوئی پریشر نہیں میں اپنی مرضی سے بیان ریکارڈ کرا رہا ہوں۔

قیصر امین بٹ نے کہا کہ 1998 میں پراپرٹی کا کام شروع کیا، 2002 میں خواجہ سعد رفیق نے ندیم ضیا نامی شخص سے متعارف کروایا، خواجہ سعد رفیق نے کہا ندیم ضیا تمھارے ساتھ کام کرے گا۔

انہوں نے کہا ندیم ضیا کی دیگر کمپنیوں سے میرا کوئی تعلق نہیں، اس بات کا علم نہیں ندیم ضیا کی اور کتنی کمپنیاں ہیں،2006 میں میرا 50 فیصد پرکاروبار شروع ہوگیا۔

قیصر امین بٹ نے کہا کہ ندیم ضیا بعدمیں 92 فیصدکاروبارکا شیئرہولڈر بن گیا،شکوہ بھی کیا میں 50 فیصد کاروبار کا شیئر ہولڈر ہوں، ملزم نے بتایا کہ میری بات کو اہمیت نہ دی گئی،مجھ سے ناانصافی کی گئی۔

Spread the love
  • 16
    Shares

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں