اسلام آباد: پہلی مرتبہ خواجہ سرا کو ڈرائیونگ لائسنس جاری

خواجہ سرا

اسلام آباد: وفاقی دار الحکومت کی پولیس نے ایک خواجہ سرا کو ڈرائیونگ لائسنس جاری کر دیا، یہ اپنی نوعیت کا اسلام آباد میں پہلا ڈرائیونگ لائسنس ہے۔

تفصیلات کے مطابق اسلام آباد پولیس نے پہلی خواجہ سرا کو ڈرائیونگ لائسنس جاری کر دیا، علی لیلیٰ ٹرانس جینڈر کمیونٹی کی رہنما ہیں۔

علی لیلیٰ نے پندرہ سال پہلے ڈرائیونگ شروع کی، جب کہ انھیں اسلام آباد پولیس کی جانب سے ابھی ڈرائیونگ لائسنس ملا۔ ان کا کہنا ہے کہ 2000 میں ان کے والد نے ڈرائیونگ سکھائی تھی۔

علی لیلیٰ راولپنڈی میں آواز شی میل فاؤنڈیشن کی صدر بھی ہیں، وہ ڈرائیونگ سیکھنے کے بعد سے جڑواں شہروں میں بغیر لائسنس کے پندرہ سال تک گاڑی چلاتی رہی ہیں۔

علی لیلیٰ کو ڈرائیونگ لائسنس کے لیے درکار تمام ٹیسٹ پاس کرنے کے بعد لائسنس جاری کیا گیا، انھوں نے کہا کہ آج میں بہت خوش ہوں، اب میری کمیونٹی کے دوسرے ممبرز کو بھی لائسنس مل سکے گا۔

خیال رہے کہ سپریم کورٹ آف پاکستان کے احکامات کے بعد علی لیلیٰ کو صنفی نشان ایکس والا قومی شناختی کارڈ بھی جاری کیا جا چکا ہے۔

مارچ کے شروع میں خیبر پختونخوا پولیس کی جانب سے 30 ٹرانس جینڈر پرسنز کو ڈرائیونگ لائسنس جاری کیے جا چکے ہیں۔

Spread the love
  • 2
    Shares

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں