دینی وسیاسی جماعتوں کا 5فروری یوم یکجہتی کشمیر منانے کا اعلان

دینی وسیاسی جماعتوں
loading...

دینی وسیاسی جماعتوں نے5فروری کو یوم یکجہتی  کشمیر منانے کا اعلان کیا ہے۔ یہ فیصلہ تمام جماعتوں نے مل کر کیا

لاہور:  کل مسالک ’’ورلڈ پاسبان ختم نبوت‘‘آفس گلبرگ لاہور میں سالانہ کل جماعتی یکجہتی کشمیر کانفرنس میں ملک کی مقتدر 20 بڑی دینی و سیاسی جماعتوں جے یو آئی،جے یو پی،ورلڈ پاسبان ختم نبوت، جماعت اسلامی،جماعت الدعوۃ،مسلم لیگ (علماء ونگ)،جمعیت اہلحدیث،جمعیت اہلسنت، تحریک ملت جعفریہ، تنظیم علماء و مشائخ اہلسنت،خاکسار تحریک،مسلم کانفرنس،اتحاد علماء کونسل،مصطفائی جسٹس موومنٹ،مجلس احرارِ اسلام، پیپلز موومنٹ (بھٹو شہید)جمعیت مشائخ پاکستان، عالمی تحریک دعوت الحق،پی ڈی پی اور تحریک اتحاد بین المسلمین کے راہنماؤں علامہ ممتاز اعوان،مولانا امیر حمزہ،ڈاکٹر فرید احمدپراچہ،علامہ زبیر احمد ظہیر،پیر ولی اللہ شاہ،مولانا یوسف احرار،مولانا محمد شفیع جوش،ڈاکٹر سرفراز احمد اعوان، مفتی احمد علی ثانی، شعیب الرحمن قاسمی، محمد نعیم بادشاہ،علامہ یونس ریحان،عامر رشید ، مولانا حنیف حقانی،میاں اشرف عاصمی ایڈووکیٹ،مفتی عاشق حسین،اسد اللہ فاروق، اصغر عارف چشتی،مولانا منسوب رحیمی اور عامر چشتی نے شرکت کی ۔

کانفرنس میں 20 دینی و سیاسی جماعتوں نے 5 فروری کو ملک گیر یوم یکجہتی کشمیر منانے کا اعلان کیا ۔جس کے تحت کشمیر پر بھارتی غاصبانہ ناجائز قبضے اور مظالم کیخلاف  5 فروری کو کراچی تا خیبر ملک بھر میں بھارت کے خلاف اور کشمیریوں کے حق میں احتجاجی جلسے ومظاہرے کیےجائیں گے اور جلوس و ریلیاں نکالی جائیں گی اور کشمیری بھائیوں سے اظہارِ یکجہتی کیلئے انسانی ہاتھوں کی زنجیریں بھی بنائی جائینگی۔

مقررین نے کہا کہ کشمیریوں کی جدوجہدِ آزادی سے بھارت کے پاؤں مقبوضہ کشمیر سے اکھڑ چکے ہیں دنیا کی کوئی طاقت اب کشمیریوں کو زیادہ دیر تک غلام نہیں رکھ سکتی شہداء و مجاہدین کشمیر کی قربانیوں سے کشمیر جلد آزاد ہوگا اور بھارت سوویت یونین کی طرح ٹکڑے ٹکڑے اور تباہ و برباد ہوگا

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں