یمنی عوام کو مصیبت میں ڈالنے پر خامنہ ای کا محاسبہ ہونا چاہیے،امریکی وزیرخارجہ

وزیر خارجہ مائیک پومپیو

ایران کی وجہ سے یمنی عوام کی مشکلات طول پکڑ گئیں،سلامتی کونسل پابندیوں کے حوالے سے ہمارا ساتھ دیں،بیان

واشنگٹن: امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو کا کہنا ہے کہ ایران کی جانب سے یمن میں حوثی ملیشیا کی مدد نے صرف پڑوسی ملکوں پر حملوں ہی کا موقع فراہم نہیں کیا بلکہ اس کے نتیجے میں یمن میں انسانی بحران مزید گھمبیر ہوا ہے۔

میڈیارپورٹس کی معلومات کے مطابق مائیکرو بلاگنگ ویب سائیٹ ٹوئٹرپر پوسٹ کی گئی ٹویٹس میں امریکی وزیرخارجہ نے ایرانی سپریم لیڈر آیت اللہ علی خامنہ ای کے محاسبے پر زور دیا۔

مائیک پومپیو کا کہنا تھا کہ خامنہ خلیج میں عدم استحکام اور یمنی عوام کی مصائب وآلام کی طوالت کے ذمہ دار ہیں۔ یمنی عوام کو مصیبت میں ڈالنے میں معاونت کرنے والے ایرانی رہبر انقلاب آیت اللہ علی خامنہ ای کا کڑا محاسبہ ہونا چاہیے۔

مائیک پومپیو نے کہا کہ ہم سلامتی کونسل کے دیگر چودہ رکن ممالک پر پر زور دیتے ہیں کہ وہ ایران پر پابندیوں کے حوالے سے ہمارا ساتھ دیں۔

Spread the love

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں