ہائیکورٹ نے شہباز شریف کی ضمانت پر رہائی، نیب کا بینج پر اعتراض مسترد

درخواست ضمانت

لاہور: ہائیکورٹ نے مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف کی ضمانت کی درخواستوں پر بینچ کی تبدیلی کی نیب کی درخواست مسترد کردی۔

چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ سردار محمد شمیم خان نے نیب کی درخواست پر سماعت کی اور فیصلہ محفوظ کیا۔

عدالت نے مختصر فیصلہ سناتے ہوئے نیب کی جانب سے شہباز شریف کی ضمانت کی درخواستوں کی سماعت کرنے والے بینچ کی تبدیلی کی درخواست مسترد کردی۔

نیب نے مؤقف اختیار کیا تھا کہ شہباز شریف کی درخواست ضمانت پر جسٹس ملک شہزاد کی سربراہی میں 2 رکنی بینچ سماعت کررہا ہے اور موجودہ بینچ درخواست ضمانت پر سماعت نہیں کرسکتا۔

میاں شہباز شریف کی 3 قائمہ کمیٹوں کی رکنیت ختم

نیب کا مؤقف تھا کہ جسٹس علی باقر نجفی کی سربراہی میں بینچ کیس میں شریک ملزمان کی ضمانت کی درخواستیں مسترد کرچکا ہے اس لیے شہباز شریف کی درخواست ضمانت جسٹس علی باقر نجفی پر مشتمل بینچ کو بھجوائی جائے۔

یاد رہے کہ نیب نے قومی اسمبلی میں قائد حزب اختلاف اور مسلم لیگ (ن) کے صدر شہباز شریف کو آشیانہ اقبال ہاؤسنگ اسکینڈل میں اختیارات کے ناجائز استعمال کے جرم میں گرفتار کیا تھا اور وہ عدالتی ریمانڈ پر جیل میں ہیں۔

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں