برہنہ سونے والے زیادہ پرسکون!

رات کو سونے کا لباس کتنا آرام دہ ہونا چاہیے اور اس کے صحت پر کیا اثرات ہوتے ہیں، اس کے متعلق تو سائنسی تحقیقات میں بتایا جاتا رہتا تھا لیکن اب سائنسدانوں نے بے لباس سونے کا ایسا فائدہ بتا دیا ہے جو کوئی سوچ بھی نہ سکتا تھا۔

میل آن لائن کے مطابق میٹرس ایڈوائز نامی تنظیم نے 1ہزار افراد پر مشتمل سروے کیا جس میں ان سے پوچھا گیا کہ وہ لباس پہن کر سوتے ہیں یا برہنہ۔ حیران کن طور پر دو تہائی افراد کا کہنا تھا کہ وہ برہنہ سوتے ہیں۔ پھر سائنسدانوں نے ان کے ذہنی سکون و اطمینان کے ٹیسٹ کیے جن میں یہ انکشاف ہوا کہ جن لوگوں نے برہنہ سونے کا اعتراف کیا تھا وہ دوسروں کی نسبت زیادہ پرسکون تھے اور ان میں خوشی کا لیول دوسروں سے کہیں زیادہ تھا۔
رپورٹ کے مطابق سائنسدانوں نے اس کے اسباب جاننے کے لیے تحقیق کی تومعلوم ہوا کہ جو لوگ برہنہ سوتے ہیں وہ زیادہ جنسی عمل کرتے ہیں جس کی وجہ سے ان کی نیند دوسروں سے زیادہ پرسکون ہوتی ہے۔جس کے ان کی ذہنی و نفسیاتی صحت انتہائی مثبت اثرات مرتب ہوتے ہیں اور وہ دوسروں سے زیادہ خوش رہتے ہیں۔

تحقیقاتی ٹیم کے سربراہ جوئی مرکیوریو کا کہنا تھا کہ ’’جن لوگوں نے برہنہ سونے کا اعتراف کیا ان میں سے 58فیصد کا کہنا تھا کہ وہ اس لیے برہنہ سوتے ہیں کیونکہ بے لباسی کی حالت میں وہ خود کو زیادہ آرام دہ سمجھتے ہیں۔ 54فیصد کا کہنا تھا کہ برہنہ سونے سے انہیں اچھی نیند آتی ہے۔دوسری طرف پاجامہ پہن کر سونے والوں میں سے بعض کا کہنا تھا کہ انہیں خوف آتا ہے کہ کوئی انہیں دیکھ نہ لے، اس لیے وہ پاجامہ پہن کر سوتے ہیں۔ بعض نے کہا کہ وہ حدت کے لیے پاجامہ پہن کر سوتے ہیں جبکہ چند ایک کا کہنا تھا کہ ان کی پرورش ہی اسی طرح کی گئی تھی۔‘‘

بشکریہ ہم سب

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں