روزے میں پیاز کاٹتے ہوئے رونے سے کیسے بچا جائے

پیاز ویسے تو ہمارے معاشرے میں روز مرہ کی خوراک کا حصہ ہے لیکن رمضان میں اس کا استعمال بڑھ جاتا ہے، لیکن یہی پیاز کاٹنے والے کو آنسوؤں سے رونے پر مجبور کر دیتی ہے۔

افطارکی تیاری کے دوران گھر میں تقریباً ہر روز پیاز کٹنے کے باعث کام میں مصروف تمام افراد رونے پر مجبور ہوتے ہوں گے۔ پیاز چاہے آپ کاٹ رہے ہوں یا کوئی اور، وہاں موجود ہر شخص کو رونا پڑتا ہے۔

لیکن کیا آپ جانتے ہیں کہ ایک ایسا خفیہ طریقہ بھی ہے جس پر عمل کرنے کے بعد آپ پیاز کٹنے کے دوران ہرگز نہیں روئیں گے۔

دراصل پیاز میں ایسے مرکبات موجود ہوتے ہیں جو ویسے تو بے ضرر ہوتے ہیں لیکن جب پیاز کو ٹکڑوں کی شکل میں کاٹا جائے تو یہ اپنی جگہ تبدیل کرلیتے ہیں جس کے باعث ایک تیز قسم کی گیس خارج ہوتی ہے۔

یہ گیس آپ کی آنکھوں میں جلن پیدا کرتی ہے جس کے بعد آپ کے دماغ کو سگنل ملتے ہیں کہ فوری طور ان اجزا کو آنکھوں سے دھو دیا جائے یوں آپ کی آنکھوں سے آنسو بہنے لگتے ہیں۔

پیاز کٹنے کے دوران رونے سے بچنے کی ایک ترکیب یہ ہے کہ پیاز کو فریج میں رکھ دیا جائے۔

مریض کیسے روزہ رکھ سکتے ہیں؟

جب یہ مرکبات ٹھنڈے ہوں گے تو جلن پیدا کرنے والی گیس خارج نہیں کریں گے۔

یوں آپ کی آنکھیں بھی جلنے سے بچیں گی اور آپ کو رونا بھی نہیں پڑے گا۔

(Visited 1 times, 1 visits today)
loading...

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں