مقبوضہ کشمیر میں بھارتی مظالم جاری، حریت پسند ذاکر موسیٰ سمیت 2 نوجوان شہید

سری نگر: مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج نے کشمیری عوام میں آزادی کی نئی روح پھونکنے والے شہید برہان وانی کے ساتھی ذاکر موسی سمیت دو 2 افراد شہید کردیا۔

کشمیری میڈیا کے مطابق قابض بھارتی فورسز نے ظلم و بربریت جاری رکھتے ہوئے ضلع پلواما میں گھر گھر تلاشی اور محاصرے کے  دوران ایک گھر کو دھماکے سے اڑا دیا۔

قابض بھارتی فوج نے فائرنگ کر کے ذاکر موسیٰ نامی کو کشمیری کو شہید کردیا جو عظیم نوجوان حریت پسند کشمیری برہان وانی کا قریبی ساتھی تھا۔

ضلع پلوامہ کے علاقے ترال میں ذاکر موسیٰ کی نماز جنازہ ادا کی گئی جس میں سخت پابندیوں کے باوجود ہزاروں کی تعداد میں لوگوں نے شرکت کی۔

چند روز قبل ضلع کلگام کے علاقے گوپال پورہ میں  قابض بھارتی فوج نے فائرنگ کر کے 2 شہریوں کو شہید کردیا تھا جب کہ قابض انتظامیہ نے کلگام میں انٹرنیٹ سروس بھی معطل کردی تھی۔

مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کی دہشت گردی کیخلاف آج مکمل ہڑتال

کٹھ پتلی انتظامیہ نے وادی میں انٹرنیٹ اور موبائل سروس بند کر کے کرفیو نافذ کر دیا ہے، سکول، کالج بند کر دیئے گئے ہیں۔ نوجوان لیڈر کی شہادت پر پوری وادی میں لوگ بھارت کے خلاف مظاہرے کر رہے ہیں۔

(Visited 15 times, 1 visits today)

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں