کن خوبصورت ترین مقامات کی سیرآپ کو کرنی چاہیے؟

سیاحتی مقامات

بات کی جائے پاکستان میں سیر و سیاحت  کی  تو ہمارا وطن قدرتی حسن سے مالا مال ہے اور سیر و سیاحت کرنے والوں کے لیے یہ ملک جنت سے کم نہیں ۔

کیونکہ پاکستان کو اللہ تعالیٰ نے ہر قسم کے موسم   سے نوازا ہے اور انہی موسموں کی نسبت  ایسے علاقے بھی ہیں جہاں ذیادہ تر ٹھنڈ رہتی ہے اور اس کے علاوہ ان کی خوبصورتی دیدنی ہے تو آیے آپ کو پاکستان کے چند خوبصورت مقامات کے بارے میں بتلائیں۔

وادی نلتر

یہ ویلی گلگت سے ڈھائی گھنٹے کے فاصلے پر واقع ہے اور یہاں کی خوبصورت رنگوں کی جھیلیں اس مقام کو دلکش اور دیکھنے کے قابل بناتی ہیں۔ یہاں دنیا کا بہترین آلو بھی کاشت کیا جاتا ہے، حالانکہ یہ پہاڑی علاقہ ہے پر کہیں کہیں زرخیز زمین بھی ہے۔ اگر آپ سیر و سیاحت کے شوقین ہیں تو اس مقام کی سیر ضرور کریے۔

خوبصورت مقامات
فائل فوٹو
سیاحتی مقامات
فائل فوٹو

وادی نیلم ، آزاد کشمیر

آزاد کشمیر کے دارلحکومت مظفرآباد کےشمال کی جانب 240 کلو میٹر کی مسافت پر پھیلی ہوئی حسین و جمیل وادی کا نام وادی نیلم ہے اور  اس وادی کا شمار پاکستان اور کشمیر کی خوبصورت ترین وادیوں میں ہوتا ہے ۔ یہاں  کے خوبصورت سرسبز درخت، ٹھنڈے پانی کی آبشاریں اور چشمے اس کی خوبصورتی کو چار چاند لگاتے ہیں۔  اس کو دریائے نیلم کی وجہ سے نیلم ویلی کہا جاتا ہے۔

سیاحتی مقامات
فائل فوٹو

جھیل سیف الملوک اور آنسو جھیل ، ناران کاغان ،

پاکستان کے خوبصورت مقامات میں صوبے’’ کے پی کے‘‘ کے علاقے ناران اور کاغان میں واقع جھیل سیف الملوک اور آنسو جھیل بھی ہے ۔ یہاں ان گرمیوں کے دنوں میں جانا آپ کی طبیعت کو پرجوش کردے گا ۔ جھیل سیف الملوک سے کچھ فاصلے پر آنسو جھیل واقع ہے پر یہاں جانے کے لیے آپ کو پیدل یہ وہاں موجود گھوڑ سوار آپ کو اس جھیل تک لے جائیں گے۔ سیف الملوک جھیل سے آپ کو پہاڑوں کا خوبصورت نظارہ ملے گا اور یہاں سے نانگاپربت کی پہاڑی بھی باآسانی دیکھی جاسکتی ہے۔

سیاحتی مقامات
فائل فوٹو
سیاحتی مقامات
آنسو جھیل فائل فوٹو

زیارت

بلوچستان کی بات کی جائے تو یہاں کا خوبصورت اور روائتی مقام زیارت ضرور دیکھیے۔ زیارت کوئٹہ سے تین گھنٹے کے فاصلے پر مشتمل ہے اور اس کے راستے میں آنے والے خوبصورت مقامات آپ کو راستے میں ہی رکنے پر مجور کریں گے ۔

فائل فوٹو

اس کی خاص پہچان  کی وجہ یہاں موجود ’’قائداعظم ریذیڈینسی ‘‘ جو ایک  خوبصورت عمارت ہے جہاں قائداعظم محمد علی جناح نے اپنی زندگی کے چند آخری ایام گزارے تھے ۔

سیاحتی مقامات
فائل فوٹو

یہاں ایک خاص مقام سینڈی من تنگی ہے جو آبشار اور چشموں کی وجہ سے مشہور ہے جبکہ ایک خوبصورت فاریسٹ فیملی پارک  سیر کرنے کے لیے  اسی جگہ موجود ہے۔ سردیوں میں آپ کو برف باری کا ایک خوبصورت نظارہ یہاں ملے گا۔

ہنزہ ویلی

گلگت سے دو گھنٹے کی مسافت پر واقعے یہ خوبصورت مقام بھی اپنی تاریخ اور دلکش نظاروں کی وجہ سے دیکھنے سے تعلق رکھتا  ہے ۔

سیاحتی مقامات
فائل فوٹو

وادی پھندر

گلگت کے علاقہ گیزرمیں موجود  یہ وادی اپنی خوبصورت جھیلوں اور اس مقام  پر جاتے ہوئے خوبصورت نظارے جن میں دریا کا رستے کا ساتھ ساتھ چلنا اور میٹھے اور شفاف پانی کے چشموں کی وجہ سے نمایاں مقام رکھتی ہے۔

سیاحتی مقامات
فائل فوٹو

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں