اورمیرے گھر میں مرغیوں کا آنا

عرض کیا۔ ”کچھ بھی ہو۔ میرے گھر میں مرغیوں کا آنا برداشت نہیں۔ میرا راسخ عقیدہ ہے کہ ان کا صحیح مقام پیٹ اور پلیٹ ہے اور شاید۔“ ”اس راسخ عقیدے میں میری طرف سے پتیلی کا اور اضافہ کرلیجیے۔“ ..مزید پڑھیں

’تلاش والدہ‘

اخبارات میں اکثر و بیشتر ‘تلاش گمشدہ’ کے اشتہارات ضرور شائع ہوتے ہیں، جائیداد کی خرید و فروخت کے اشتہارات کے علاوہ مصنوعات اور ملازمتوں کے اشتہارات کی بھی بھرمار ہوتی ہے لیکن جس اشتہار نے مجھے ڈاکٹر ذیشان سبحانی ..مزید پڑھیں

کالم نویس، انڈرویئر اور برائیلر تجزیہ کار

نوید نسیم کہیں پڑھا تھا کہ “جنھیں پڑھنا چاہیے، وہ لکھ رہے ہیں اور جنھیں لکھنا چاہیے، وہ پڑھنے پر مجبور ہیں”۔ اگر ہم روزانہ کی اخبارات کا مطالعہ کریں۔ تو ہمیں سمجھ میں آتا ہے کہ کسی نے ایسا ..مزید پڑھیں

پاکستانی میڈیا انڈسٹری بحران کا شکار کیوں؟ …… 2

حصہ اول کیلئے کلک کریں: پاکستانی میڈیا انڈسٹری بحران کا شکار کیوں؟….. 1 مالکان یہ کہتے ہیں کہ عمرانی حکومت ان کا گلہ گھونٹ رہی ہے۔ سرکاری اشتہارات بند کردیئے ہیں اور واجب الادا فنڈز ریلیز نہیں کررہی۔ اس لئے ..مزید پڑھیں

پاکستانی میڈیا انڈسٹری بحران کا شکار کیوں؟

ایک زمانہ تھا جب پرانے صحافی یہ سوچا کرتے تھے کہ ایک وقت آئے گا جب پاکستانی میڈیا تمام بندشوں سے مکمل طور پر آزاد ہو جائے گا۔ یہ وہ زمانہ تھا جب بات کہنے کی بھی اجازت نہیں تھی ..مزید پڑھیں