خورشٹ

ہم دلی میں تھے۔ میرا بچہ بیمار تھا۔ میں نے پڑوس کے ڈاکٹر کاپڑیا کو بلایا وہ ایک کبڑا آدمی تھا۔ بہت پست قد، لیکن بے حد شریف۔ اس نے میرے بچے کا بڑے اچھے طریقے پر علاج کیا۔ اس ..مزید پڑھیں

خودکشی کا اقدام

اقبال کے خلاف یہ الزام تھا کہ اُس نے اپنی جان کو اپنے ہاتھوں ہلاک کرنے کی کوشش کی، گو وہ اس میں ناکام رہا۔ جب وہ عدالت میں پہلی مرتبہ پیش کیا گیا تو اس کا چہرہ ہلدی کی ..مزید پڑھیں

خودکشی

زاہد صرف نام ہی کا زاہد نہیں تھا‘ اس کے زہد و تقویٰ کے سب قائل تھے‘ اس نے بیس پچیس برس کی عمر میں شادی کی‘ اس زمانے میں اُس کے پاس دس ہزار کے قریب روپے تھے‘ شادی ..مزید پڑھیں

چوہے دان

شوکت کوچُوہے پکڑنے میں بہت مہارت حاصل ہے۔ وہ مجھ سے کہا کرتا ہے یہ ایک فن ہے جس کو باقاعدہ سیکھنا پڑتا ہے اور سچ پوچھیے تو جو جو ترکیبیں شوکت کوچُوہے پکڑنے کے لیے یاد ہیں۔ ان سے ..مزید پڑھیں

تین میں، نہ تیرہ میں

’’میں تین میں ہوں نہ تیرہ میں، نہ ستلی کی گرہ میں‘‘ ’’اب تم نے اُردو کے محاورے بھی سیکھ لیے۔ ‘‘ ’’آپ میرا مذاق کیوں اُڑاتے ہیں۔ اردو میری مادری زبان ہے‘‘ ’’پدری کیا تھی؟ تمہارے والد بزرگوار تو ..مزید پڑھیں

تین موٹی عورتیں

ایک کا نام مسز رچمین اور دوسری کا نام مسز ستلف تھا۔ ایک بیوہ تھی تو دوسری دو شوہروں کو طلاق دے چکی تھی۔ تیسری کا نام مس ہیکن تھا۔ وہ ابھی ناکتخدا تھی۔ ان تینوں کی عُمر چالیس کے ..مزید پڑھیں

تصویر

’’بچے کہاں ہیں؟‘‘ ’’مر گئے ہیں‘‘ سب کے سب؟‘‘ ’’ہاں، سب کے سب۔ آپ کو آج ان کے متعلق پوچھنے کا کیا خیال آگیا۔ میں اُن کا باپ ہوں‘‘ ’’آپ ایسا باپ خدا کرے کبھی پیدا ہی نہ ہو‘‘ ’’تم ..مزید پڑھیں

پیرن

یہ اس زمانے کی بات ہے جب میں بے حد مفلس تھا۔ بمبئی میں نو روپے ماہوار کی ایک کھولی میں رہتا تھا جس میں پانی کا نل تھا نہ بجلی۔ ایک نہایت ہی غلیظ کوٹھڑی تھی جس کی چھت ..مزید پڑھیں

پھولوں کی سازش

باغ میں جتنے پھول تھے۔ سب کے سب باغی ہو گئے۔ گلاب کے سینے میں بغاوت کی آگ بھڑک رہی تھی۔ اس کی ایک ایک رگ آتشیں جذبہ کے تحت پھڑک رہی تھی۔ ایک روز اس نے اپنی کانٹوں بھری ..مزید پڑھیں

پھوجا حرام دا

ٹی ہاؤس میں حرامیوں کی باتیں شروع ہوئیں تو یہ سلسلہ بہت دیر تک جاری رہا۔ ہر ایک نے کم از کم ایک حرامی کے متعلق اپنے تاثرات بیان کیے جس سے اس کو اپنی زندگی میں واسطہ پڑ چکا ..مزید پڑھیں