“کاش کہ وہ زمانہِ جاہلیت پھر لوٹ آئے”

ہم نے جب آنکھ کھولی۔ تو ایک خوبصورت زمانہِ جاہلیت کا سامنا ہوا۔ تحریر: عائشہ شہزاد۔ ہمارا گاوں سڑک، بجلی اور ٹیلی فون جیسی سہولتوں سے تو محروم تھا ہی لیکن اطمینان اس قدر میسر تھا،جیسے زندگی کی ہر سہولت ..مزید پڑھیں