کشمیری عوام پاکستان میں امن وخوشحالی کے لیے دُعا گو ہیں‘سید علی گیلانی

سرینگر: مقبوضہ کشمیرمیں کل جماعتی حریت کانفرنس کے چیئرمین سید علی گیلانی نے یومِ آزادی پاکستان کے موقع پر پاکستانی عوام، حکومت اور فوج کو دل کی عمیق گہرائیوں سے مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا ہے کہ اسلامی جمہوریہ پاکستان کشمیری قوم کے حقِ خودارادیت کی حمایت کرتا ہے لہذا یہ ہمارا پسندیدہ اور محسن ملک ہے۔ کشمیرمیڈیا سروس کے مطابق سید علی گیلانی نے سرینگر سے جاری ایک بیان میں کہاکہ کشمیری عوام پاکستان میں امن، استحکام اور ترقی وخوشحالی کے لیے دُعا گو ہیں اور ہم سمجھتے ہیں کہ ایک مضبوط اور مستحکم پاکستان مسئلہ کشمیر کے حل کے لیے ایک بنیادی اور اہم ضرورت ہے۔انہوں نے کہا کہ جموں وکشمیر میں آج آبادی کا تناسب تبدیل کرنے کے حوالے سے جو سازشیں رچائی جارہی ہیں پاکستان کو ان کو بین الاقوامی سطح پر اُجاگر کرنے کے لیے موثر اقدامات اٹھانے چاہیے کیونکہ پاکستان مظلوم کشمیری قوم کی امیدوں اور آرزوؤں کا مرکز ہے۔ انہوں نے کہاکہ ہماری جدوجہدِ آزادی میں اﷲ تبارک وتعالیٰ کے بعد پاکستان ہی ایک ظاہری سہارا ہے جو قومی اور بین الاقوامی فورموں پر ہمارے حقِ خودارادیت کی حمایت کرتا ہے اور جس نے ہمیشہ کشمیریوں کی سیاسی، سفارتی اور اخلاقی مدد کی ہے۔ حریت چےئرمین نے کہا کہ پاکستان کے ساتھ ہماری محبت محض کوئی جذباتی کیفیت نہیں بلکہ اس کے لیے ہمارے پاس ٹھوس دلائل اور وجوہات ہیں۔ہمیں اس ملک کی حمایت حاصل نہ ہوتی تو حقِ آزادی مانگنے کے جرم میں نہ صرف کشمیری قوم کو صفحۂ ہستی سے مٹادیا جاتا اور ان پر بمباری کی جاتی بلکہ خود بھارتی مسلمانوں کو بھی فرقہ پرست قوتیں سمندر بُرد کرتیں یا جلاوطن ہونے پر مجبور کرتیں۔انہوں نے افواج پاکستان کو خاص طور پر مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ اس پر دوہری ذمہ داری عائد ہے اور اس کو نہ صرف پاکستان کی جغرافیائی سرحدوں کی حفاظت کرنی ہے بلکہ اس ملک کی نظریاتی سرحدوں اور بنیادوں کی حفاظت بھی اسی کی ذمہ داری ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان اسلام کے نام پر حاصل کیا گیا ملک ہے اور اسلامی نظریہ حیات ہی اس کی سلامتی، استحکام اور روشن مستقبل کی ضمانت ہے جس کے قیام میں افواج پاکستان ایک اہم رول ادا کرسکتی ہیں۔

مزید پڑھیں۔  وزیراعظم ہاؤس میں موجود 8 بھینسیں اور 4 ہیلی کاپٹر نیلام کرنے کا فیصلہ

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں