شوہر سے الیحدگی کا فیصلہ

Loading...

لاہور: معروف گلوکارہ حمیرا ارشد نے اپنے شوہر احمد بٹ سے علیحدگی کا حتمی فیصلہ کر لیا۔ ذرائع سے معلوم ہوا ہے کہ دونوں کے درمیان ایک مرتبہ اختلافات ختم کروانے کے لیے ان کے قریبی عزیز و اقارب اور دوست احباب نے پیش رفت شروع کر دی ہے، لیکن اس بار گلوکارہ حمیرا ارشد نے کسی کی ایک نہ سننے کی ٹھان لی ہے۔ دوسری جانب احمد بٹ کی جانب سے کچھ اہم شخصیات نے حمیرا ارشد کو سمجھانے اور صلح کر کے معاملات کورفع دفع کرنے کی تجویز دی ہے، مگر تاحال کوئی مثبت نتیجہ سامنے نہیں آیا۔ اس سلسلے میں جب حمیرا ارشد سے رابطہ کیا گیا تو انھوں نے بتایا کہ روز روز کے جھگڑے سے بہترہے کہ ایک مرتبہ علیحدگی اختیارکرلی جائے۔ میرے پاس طلاق کے علاوہ اب کوئی دوسرا راست نہیں بچا۔ میں نے احمد کو متعدد بار موقع دیا کہ وہ اپنے آپ کو سدھار لے، لیکن وہ عادت سے مجبور ہے۔ اس لیے میں نے عید الاضحی کے بعد عدالت سے رجوع کرنے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ گلوکارہ نے بتایا کہ احمد نے مجھ سے رابطہ کرنے کی کوشش کی اور معافی بھی مانگی ہے لیکن میں اس بار کسی بھی طرح کے دھوکہ میں نہیں آنی چاہتی۔ ہمارے آپسی اختلافات میڈیا کے ذریعے پوری دنیا میں پہنچ چکے ہیں۔ میں جہاں بھی جاتی ہوں تو ایک ہی موضوع زیر بحث ہوتا ہے کہ ہمارا جھگڑا ہوا اور طلاق کب ہو گی؟ میں اس حوالے سے لوگوں کو جواب دے دے کر تنگ آ چکی ہوں۔ میں ایک گلوکارہ ہوں اور روز، روز کے جھگڑوں سے میرا کام بھی متاثر ہوتا ہے۔ اس لیے میں نے اس سفر کو مزید آگے نہ بڑھانے کا فیصلہ کر لیا ہے۔ ایک سوال کے جواب میں حمیرا ارشد نے کہا کہ ماضی میں کئی بار شدید جھگڑے ہوئے ، لیکن نے ہربار سمجھوتہ کیا اوراحمد کی بہت سی برائیوں کے باوجود اس کے ساتھ زندگی کا سفر جاری رکھا۔ جس کا مقصد صرف ایک ہی تھا کہ میں اپنا گھر برباد نہیں کرنا چاہتی تھی، لیکن ہر کسی کی ایک حد ہوتی ہے، جواب پار ہو چکی ہے۔ اسی لیے اب اس سفر کو مزید آگے بڑھانا میرے لیے ممکن نہیں ہے۔ میں نے اپنا فیصلہ اللہ تعالی کی عدالت میں بھیج دیا ہے۔دوسری جانب جب اس حوالے سے احمد بٹ سے رابطہ کیا گیا توان کا کہنا تھا کہ گزشتہ چھ ماہ سے حمیرا ارشد سے میرا کوئی تعلق نہیں ،تین ماہ قبل میں خلع کے کاغذات پر دستخط کرنے کے بعد اپنے بیٹے کے ساتھ امریکا چلا گیا تھا، جس کے ثبوت بھی موجود ہیں، حمیرا ارشد ،اس کی فیملی اور سخی سرور بٹ جھوٹ بول کر مجھے بدنام کر رہے ہیں، جلد بہت اہم ثبوت میڈیا کے سامنے پیش کروں گا۔

Loading...
(Visited 11 times, 1 visits today)
Loading...
Advertisements

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں