شرجیل میمن کیس: چیف کیمیکل ایگزامنر ڈاکٹر زاہد انصاری معطل

چیف کیمیکل ایگزامنر
Loading...

کراچی: سندھ حکومت نے پیپلزپارٹی کے رہنما شرجیل میمن کے کمرے سے برآمد مبینہ شراب کی بوتلوں کا کیمیکل معائنہ کرنے والے چیف کیمیکل ایگزامنر ڈاکٹر زاہد انصاری کو معطل کردیا۔

سندھ حکومت کے نوٹیفکیشن کے مطابق ڈاکٹر زاہد انصاری نے غیر روایتی طریقہ کار کے تحت کیمیکل معائنہ کیا جس کے بعد انہیں چیف کیمیکل ایگزامنر کے عہدے سے معطل کردیا گیا ہے جب کہ انہیں سیکریٹری سندھ بلڈ ٹرانسفیوژن اتھارٹی کے عہدے سے بھی ہٹادیا گیا ہے۔نوٹیفکیشن میں ڈاکٹر زاہد انصاری کو معطلی کے دوران ہیڈکوارٹر میں موجود رہنے کا حکم دیا گیا ہے۔

یاد رہے کہ شرجیل میمن کے کمرے سے برآمد ہونے والی بوتلوں کی جانچ کرنے والے چیف کیمیکل ایگزامنر نے اپنی رپورٹ میں لکھا تھا کہ اسپتال کے کمرے سے ملنے والی ایک بوتل میں شہد اور دوسری بوتل میں کھانے کا تیل موجود ہے۔

loading...

چیف کیمیکل ایگزامنر ڈاکٹر زاہد انصاری کی دستخط شدہ رپورٹ کے مطابق سیل شدہ بوتلیں کیمیکل لیباریٹری بھیجی گئی تھیں۔

کیمیکل لیبارٹری کی رپورٹ کے مطابق شرجیل میمن کے خون کے نمونوں میں بھی الکوحل نہیں پایا گیا۔

(Visited 12 times, 1 visits today)
Loading...
Advertisements

Comments

comments

اپنا تبصرہ بھیجیں